سریلے……

August 30, 2018
 

’’ایک نئی صبح کا آغاز ہو گیا ہے۔‘‘

میں نے جذباتی ہو کر اعلان کیا۔

ڈوڈو نے ایسے دیکھا جیسے میرا دماغ چل گیا ہو۔

میں نے کوئی پرواہ نہ کی،

اپنا خطاب جاری رکھا،

’’نیا سورج طلوع ہو رہا ہے۔

نئے دور کی شروعات ہو رہی ہے۔

درخت جھوم رہے ہیں۔

پھول مسکرا رہے ہیں۔

سریلے پرندے گیت گا رہے ہیں۔‘‘

میں چپکا ہوا تو ڈوڈو نے بد تمیزی سے کہا،

’’ابے الو! کون سی نئی صبح؟

رات کے ڈھائی بج رہے ہیں۔

اور یہ جو تمہیںسریلے پرندے لگ رہے ہیں،

در اصل جھینگر شور مچا رہے ہیں۔‘‘

(کہانی نویس کے نام کیساتھ ایس ایم ایس اور واٹس ایپ رائےدیں00923004647998)


مکمل خبر پڑھیں