Advertisement

سرفراز کا شاداب کوڈراپ کرنے کا دفاع

June 12, 2019
 

پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے آسٹریلیا کیخلاف ورلڈ کپ میچ میں شاداب خان کو ڈراپ کرنے کے فیصلے کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی ٹیم چار فاسٹ بولرز کے ساتھ میدان میں اترنا چاہتی تھی اور ساتھ ساتھ بیٹنگ پر بھی کوئی سمجھوتہ نہیں کرنا تھا اس لئے شاداب کو ڈراپ کیا گیا۔

سرفراز احمد نے کہا کہ ابتدائی تیس اوورز میں پاکستان نے اچھی بولنگ نہیں کی ، جن ایریاز میں گیند کرانا تھی ان ایریا ز میں گیند نہیں کرائیں جس کی وجہ سے پاکستان کو شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

Your browser doesnt support HTML5 video.

انہوں نے اس بات کا اعتراف کیا کہ پاکستان نے میچ کے دوران کھیل کے تینوں شعبوں میں غلطیاں کیں۔

سرفرازاحمد نے کہا کہ وکٹ دو سو ستر، دو سو اسی کا تھا ، آخری بیس اوورز میں پاکستا ن نے آسٹریلیا کو روک لیا تھا لیکن بیٹنگ میں پارٹنرشپ نہ ملنے کی وجہ سے ٹیم ہدف تک نہیں پہنچ سکی ۔ بیٹسمین سیٹل ہوجانے کے بعد آرام سے وکٹ گنوائیں۔

قومی ٹیم کے کپتان نے کہا کہ دونوں ٹیموں کے درمیان فرق فیلڈنگ تھا، بڑی ٹیموں سے جیتنا ہے تو ایسی غلطیاں نہیں ہونی چاہیے۔

سرفراز نے امید ظاہر کی کہ انڈیا کیخلاف میچ میں پاکستانی ٹیم بہتر کھیل پیش کرے گی ۔

انہوں نے کہا کہ آج عامر اور وہاب ریاض کی کارکردگی مثبت پہلو رہے۔


مکمل خبر پڑھیں