آپ آف لائن ہیں
جمعرات9؍شعبان المعظم1439ھ 26؍اپریل2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
x
Hair Dyes Are Linked To Chemicals That Can Cause Cancer

امریکی ماہرین صحت نے کہا ہے کہ بالوں کو رنگنے اور سیدھا کرنے والے کیمیکل کینسر کا موجب بن سکتے ہیں۔

نیوجرسی میں رٹگرز یونیورسٹی کے ماہرین کی تحقیق کے مطابق ماہرین نے خواتین میں بریسٹ کینسر کے حوالے سے ایک سروے کیا جس میں 20 سے 75 سال کی 4285 خواتین نے حصہ لیا اور ان میں سے 2280 خواتین کو بریسٹ کینسر تھا جن میں 1508 سیاہ فام اور 772 سیفد فام تھیں۔

x
Advertisement

سروے کے مطابق 58 فیصد سفید فام اور 30 فیصد سیاہ فام خواتین نے بالوں کا رنگ استعمال کیا جب کہ 5 فیصد سفید فام اور 88 فیصد سیاہ فام خواتین نے ریلیکسر استعمال کیے جو بریسٹ کینسر کی وجہ بنے۔

ماہرین نے بغور جائزہ لینے کے بعد کہا ہے کہ سیاہ فام خواتین بالوں کو رنگنے کے لیے گہرے شیڈز استعمال کرتی ہیں اور جن خواتین نے اسے استعمال کیا، رنگ استعمال نہ کرنے والی خواتین کے مقابلے میں وہ بریسٹ کینسر سے 50 فیصد زیادہ متاثر ہوئیں جبکہ سفید فام خواتین میں یہ رحجان 74 فیصد تھا۔

تاہم بعض جانوروں پر بالوں کے کئی رنگوں ، اسٹریٹنر، ریلیکسر اور ڈائی استعمال کرکے معلوم ہوا کہ اس کے کیمیکلز بریسٹ کینسر کی وجہ بن سکتے ہیں۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ بریسٹ کینسر کی کئی وجوہات ہوسکتی ہیں جن میں جینیاتی کیفیات، بڑھاپا اور دیگر کیفیات شامل ہیں جب کہ خواتین ہارمون تھراپی سے انکار کرکے، الکحل سے چھٹکارہ اور ورزش کرکے بریسٹ کینسر کو خود سے دور رکھ سکتی ہیں۔

​​
Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں