آپ آف لائن ہیں
منگل4؍شوال المکرم 1439ھ 19؍جون 2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Todays Print

اسلام آباد،چینوٹ(وقائع نگار،اے این این ) پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹوزرداری نے کہاہے کہ نواز شریف اور عمران خان نے ملکر ملکی سیاست کا بیڑہ غرق کر دیا ، اقتدارکا نشہ اترنے کے بعد میاں صاحب کو میثاق جمہوریت یاد آ رہا ہے، اس بار دھاندلی نہیں ہونے دینگے۔

x
Advertisement

چنیوٹ میں جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ سوچنا ہو گا کیا یہ پاکستان قائداعظم کی سوچ والا پاکستان ہے؟ پاکستان آج بھی اندھیروں میں ڈوبا ہوا ہے۔ نواز شریف اور عمران خان کو ملک کی صورتحال کی کوئی فکرنہیں، نام نہاد بڑی سیاسی پارٹی کے لیڈرز کی یہ حالت کہ اہم مسائل پر بات نہیں کرتے، ان کی نظر صرف کرسی اور اقتدار پر ہے۔

بلاول بھٹو نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ میاں صاحب جی ٹی روڈ کے اطراف رہنے والے کیسے یاد آ گئے؟ میاں صاحب آپ کی چالبازی نہیں چلے گی، اقتدارکا نشہ اترنے کے بعد میاں صاحب کو میثاق جمہوریت یاد آ رہا ہے، میاں صاحب کو گرینڈ ڈائیلاگ یاد آ گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری خارجہ پالیسی کیا ہے ہماری آواز دوسرے ملکوں تک کیوں نہیں پہنچ رہی؟ پولیس اور فوج قربانیاں دے رہی ہیں، دہشتگردی پھر سے سر اٹھا رہی ہے، کہاں ہے نیشنل ایکشن پلان؟

بلاول بھٹو نے خیبر پختونخوا میں پی ٹی آئی کی حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ عمران کے وزیر اعلی پر کرپشن کے الزامات لگ رہے ہیں، وزیر اعلی کی کرپشن سے عمران کا جہاز اور جہانگیر ترین کا کچن چل رہا ہے، پوچھتا ہوں خیبر پختونخوا کے کس علاقے میں دودھ اور شہد کی نہریں بہا دیں؟ اگر نئے پاکستان میں گالی کی سیاست ہو گی تو پھر نیا پاکستان نہیں چاہیے، میاں صاحب اور عمران دونوں ایک ہی سکے کے دو رخ ہیں، ان کی منزل صرف اقتدار ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں