آپ آف لائن ہیں
جمعرات5؍ذوالقعدہ 1439ھ19؍جولائی 2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

جسٹس اعجازالاحسن کے گھر 12گھنٹوں میں دو گولیوں کا گرنا تشویش ناک ،تفتیش پولیس کیلئے چیلنج


لاہور (نمائندہ جنگ) ماڈل ٹائون میں سپریم کورٹ کے جج مسٹر جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر 12گھنٹوں میں دو گولیوں کا گرنا تشویش ناک ہے۔ اگر گولی کا سکہ ایک ہی ہوتا جو ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب گیٹ پر گرا تھا تو شک کیا جاسکتا تھا کہ کسی نے شرارت کی ہے یا شادی پر چلایا ہوگا جو جج صاحب کے گھر آگرا لیکن جب دن کے وقت چلائی جانے والی دوسری گولی کا سکہ بھی گھر میں آکر گرا تو یہ تشویش ناک صورت حال کی طرف اشارہ ہے۔ مقدمہ کی حساسیت اور اہم شخصیت کی وجہ سے یہ کیس پولیس کے لئے ایک چیلنج ہے جسے جلد حل کرنا ہو گا۔ اگرچہ پولیس نے جائے وقوعہ سے شواہد اکٹھے کر لئے ہیں جن میں گولی سے متعلق معلومات جو فرانزک رپورٹ سے سامنے آئیں گی ۔ اردگرد سی سی ٹی وی کی فوٹیج، گولی کی سمت، کتنے فاصلہ سے گولی چلائی گئی، اس کی شدت، گولی چلانے کے مقاصد اور دیگر سوالات جن کا حل پولیس کو ڈھونڈنا ہوگا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں