آپ آف لائن ہیں
اتوار 12؍محرم الحرام 1440ھ 23؍ ستمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
لاہور(مانیٹرنگ سیل)وزارت آئی ٹی کے حکام کا کہنا ہے کہ بجلی چوری کی روک تھام کے لیے آرٹیفیشنل انٹیلی جنس کی مدد سے کام کرنے والی جدید ٹیکنالوجی تیار کر لی گئی ہے۔سینٹ کی قائمہ کمیٹی برائے آئی ٹی اور ٹیلی کام کا اجلاس سینیٹر روبینہ خالد کی زیرصدارت اسلام آباد میں ہوا جس میں بجلی چوری کی روک تھام کے لیے اقدامات کا جائزہ لیا گیا۔آئی ٹی حکام نے اجلاس کو بتایا کہ بجلی چوری کی روک تھام کے لیے جید ٹیکنالوجی تیار کر لی گئی ہے جو آرٹیفیشل انٹیلی جنس کی مدد سے کام کرے گا۔آئی ٹی حکام کے مطابق اس ٹیکنالوجی کی مدد سے 90 فیصد لائن لاسز اور بجلی کی چوری روکی جا سکتی ہے۔حکام کے مطابق یہ ٹیکنالوجی ایک چپ کی مدد سے کام کرے گی جو میٹر میں خفیہ طور پر نصب ہو گی۔وزارت آئی ٹی حکام کا کہنا ہے کہ ٹیکنالوجی اسمارٹ میٹرز اور اسمارٹ گرڈ سے بہتر ہے اور اس ٹیکنالوجی کی مدد سے صارفین کو پی ٹی سی ایل کی طرح بلنگ کی جاتی ہے۔حکام نے بتایا کہ اس ٹیکنالوجی کا تجربہ ایم ای ایس پشاور اور ایم ای ایس راولپنڈی میں کیا گیا جس سے ایک سال میں 35 فیصد بجلی چوری روکنے میں کامیابی ہوئی۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں