آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 12؍صفر المظفّر 1440ھ 22؍اکتوبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

وزیر اعظم عمران خان کے مشیر برائے تجارت و صنعت عبدالرزاق داؤد کا کہنا ہے کہ ہماری حکومت کی ترجیح معاشی بہتری ہے، ہم ڈالر اور روپے میں فرق کم کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں۔

وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت و صنعت رزاق داؤد نے لاہور چیمبر کا دورہ کیا جہاں تاجروں سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے مزید کہا کہ چیئرمین ایف بی آر نے کہا ہے کہ ٹیکس ریفارمز پر کام نومبر میں شروع ہو جائے گا۔

ان کا کہنا ہے کہ ورکرز کی ویلفیئر اور پروویڈنٹ فنڈ کے پیسے بھی اسٹیل ملز میں کھا لیے گئے، چیئرمین ایف بی آر پر عزم ہیں کہ عوام کا پیسہ لائیں گے۔

رزاق داؤد نے کہا کہ ہمیں امپورٹ کے کلچر کو ختم کرکے ایکسپورٹ کے کلچر کو فروغ دینا ہے، ہرسال 40لاکھ نوجوان نوکری کے حصول کے لیے مارکیٹ میں آتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ایکسپورٹ میں بہتری آنا شروع ہو گئی ہے، بہتری گزشتہ برس آئی جب پرائم منسٹر نے ڈیوٹی ڈرا بیک اسکیم کا اعلان کیا تھا، جون 2019 ء میں پاکستان کی ایکسپورٹ 25بلین ڈالر پر لے آئیں گے۔

مشیر وزیر اعظم نے اپنے خطاب میں مزید کہا کہ پاکستان اور چائنہ کے درمیان ٹریڈ ڈیفسٹ کو دور کرنے پر مذاکرات کیے، تاجروں اور صنعت کاروں کو گھبرانے کی ضرورت نہیں۔

انہوں نے کہا کہ تاجر اور صنعت کار کاروبار آزادی سے کریں کسی کو ناجائز تنگ نہیں کریں گے، ان کے خلاف کارروائی ہو گی جن کے خلاف پہلے سے کیسز چل رہے ہیں۔

رزاق داؤد نے یہ بھی کہا کہ ہم سب کو دعوت دیتے ہیں کہ کرپشن خاتمے میں ساتھ دیں، 70سال ہو گئے کب تک سبسڈی دیں؟

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں