آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
منگل12؍ذیقعد 1440ھ 16؍جولائی 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

صرف دل کی بیماری ہی نہیں دل ٹوٹنا بھی دل کے لیے خطرہ ہوسکتا ہے۔

نئی تحقیق میں یہ انوکھا انکشاف سامنے آیا ہے کہ دل ٹوٹنے کو غیر سنجیدہ نہ لیں، جذباتی جھٹکے دل کی بیماری میں مبتلا کرسکتے ہیں ۔

دل کی بیماریوں کی علامات اور احتیاط

سینے میں اٹھنے والا ہر درد ،دل کا دورہ نہیں ہوتا ،...

دل ٹوٹنے سے ہونے والی بیماری کو بروکن ہارٹ سنڈروم کہتے ہیں جس سے جان بھی جاسکتی ہے۔

بروکن ہارٹ سنڈروم کی وجوہات میں بیماری ، اچانک سرپرائزز، بحث ، بری خبر یا کوئی نقصان شامل ہے۔

ڈاکٹروں کے لیے دل خون کا پمپ ہے۔ شاعراور محبت کرنے والوں کے لیے دل جذبات کا سرچمشہ ہے۔ نئی ریسرچ کہتی ہے شاید دونوں ہی ٹھیک ہیں۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں