آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 13؍شوال المکرم 1440ھ17؍جون 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

لاہور کے جنرل اسپتال میں پہلی بار مریض کو بے ہوش کیے بغیر دماغ کی رسولی کا کامیاب آپریشن کیا گیا ہے،ڈاکٹروں نے جدید طریقہ علاج کے ذریعے 90فیصد سے زائد ٹیومر نکال دیا ۔

بے ہوش کیے بغیر برین ٹیومر کا علاج اب پاکستان میں بھی ممکن ہوگیا،یہ کارنامہ جنرل اسپتال کے ہیڈ آف نیوروسرجری پروفیسر رضوان مسعود بٹ اور ان کی ٹیم نے انجام دیا ۔

نارووال کے 40 سالہ مریض دلاور سردرد کی شکایت لیے دو ہفتے قبل اسپتال آیاتھا ،، اسکا سی ٹی سکین کرایا گیا تو برین ٹیومر کا انکشاف ہوا.

چنانچہ نیورسرجری کے آٹھ سے 10 ماہر ڈاکٹروں نے اُسے بے ہوش کیے بغیر آپریشن کردیا،،، مریض دلاور اب مکمل صحت مند ہے،ان کا کہنا ہے کہ ڈاکٹروں نے مکھن سے بال کی طرح ٹیومر نکال دیا ، سرجری کا پتہ ہی نہیں چلا ۔

پروفیسر ڈاکٹر رضوان مسعود بٹ نے بتایا کہ مریض کا متاثرہ حصہ کو سُن کرکے ٹیومر نکال دیا گیاہے،دلاور کو پانچ روز بعد ڈسچارج کر دیا جائے گا۔

پروفیسر ڈاکٹر رضوان مسعود کا کہنا ہے کہ دماغ کےبعد ریڑھ کی ہڈی کا آپریشن بھی اسی طریقے سے کیا جائےگا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں