آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
ہفتہ 7؍ربیع الثانی 1440ھ 15 ؍دسمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ذہن پر پاکستان اور اسامہ بن لادن سوار ہوگئے، سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر  آج پھر ہرزہ سرائی کی۔

ٹرمپ ایک بار پھر پاکستانی قربانیوں سے مکر گئے

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ ایک بار پھر پاکستانی...






سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری کردہ اپنے بیان میں امریکی صدر نے کہا کہ صدر کلنٹن نے اسامہ بن لادن کے ٹارگٹ کو مس کیا۔

ان کا کہناتھا کہ نائن الیون حملے سے پہلے ہی میں نے اپنی کتاب میں اسامہ بن لادن کی نشاندہی کردی تھی، اسے تو بہت پہلے پکڑلینا چاہیے تھا۔

ٹرمپ نے ہرزہ سرائی کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان ایسے ممالک میں سے ہے جو امریکا سے لیتے تھے اور بدلے میں کچھ نہیں دیتے تھے، اب یہ سب ختم ہورہا ہے۔

پاکستان نے ہمارے پیسے لے کر بھی ہم لئے کچھ نہیں کیا، اس کی ایک بڑی مثال اسامہ بن لادن ہے جبکہ افغانستان ایک اور مثال بن رہا ہے ۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہم نےاربوں ڈالردیئے لیکن پاکستان نے کبھی نہیں بتایا کہ اسامہ وہاں ہے، اب اسے مزید ڈالرز نہیں دیں گے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز امریکی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے ٹرمپ نے ہرزہ سرائی کرتے ہوئے تھا کہ پاکستان کی امداد اس لئے بند کی کیوں اس نے ہمارے لئے کچھ نہیں کیا۔

امریکی صدر کے اس بیان کا جواب دیتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے انہیں ریکارڈ درست کرنے کا مشورہ دیا اور چند حقائق سے روشناس کرایا تھا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں