آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
بدھ11؍ربیع الثانی 1440ھ 19؍دسمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
پشاور(سٹی رپورٹر) ضلعی حکومت پشاور نے انڈس ہائی وے پر ٹریفک اور گھروں میں حادثات میں زخمی ہونے والوں کیلئے دیہی صحت مرکز متنی پشاور میں ایمرجنسی سروس شروع کر دی تاکہ زخمیوں کو بروقت طبی امداد مہیا ہو سکے جس سے پشاور کے بڑے ہسپتالوں پر بوجھ کم ہو جائیگا اورایمرجنسی کے شکارمریضوں کو نزدیکی علاقوں میں ابتدائی طبی امداد دی جا سکے گی ۔ضلع ناظم محمد عاصم خان نے ساڑھے سات لاکھ روپے کی لاگت سے آر ایچ سی متنی میں مکمل ہونے والے ایمرجنسی بلاک کا افتتاح کیا اس موقع پر ڈسٹرکٹ ہیلتھ کمیٹی کے چیئرمین شمس الباری ،متنی کے ڈسٹرکٹ ممبر طلا محمد ،ٹاؤن ممبر قادر نواز ،پبلک ہیلتھ ایکسین عرفان خان سمیت کثیر تعداد میں اہلیان علاقہ موجود تھے۔ اس سے قبل ضلع ناظم نے آر ایچ سی متنی میں 66 لاکھ روپے کی لاگت سے سولر پینل اور ساڑھے پانچ لاکھ روپے ہسپتال کے لئے ادویات و فرنیچر کی خریداری کے لئے مختص کر دیئے جس سے لیبارٹری ٹیسٹوں اور او پی ڈی کی سہولیات میں بہتری آئی ہے اور آر ایچ سی میں او پی ڈی مریضوں کی تعداد ڈبل ہو گئی ہے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ضلع ناظم پشاور محمد عاصم خان نے کہا کہ پی ٹی آئی کے وژن اور مقامی حکومت کی مدد سے عوام کو اپنے ہی علاقوں میں صحت کی سہولیات مہیا کی جا رہی ہیں ایمرجنسی سروس شروع کرنے سے سڑک اور

گھریلو حادثات میں زخمی ہونے والوں کو طبی امداد اور فرسٹ ایڈ میں مدد مل جائے گی اور معمولی زخمیوں کو اب پشاور شہر میں شفٹ کرنے کی ضرورت نہیں رہے گی۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں