آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
بدھ4؍ربیع الثانی 1440ھ 12؍دسمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
پشاور (نمائندہ جنگ)آئل ٹینکرکے ذریعے مبینہ طور اغواء کئے جانے والے بچوں کی ایرانی سرحد پر بازیابی کی کہانی کا ڈراپ سین ہو گیا ،،تمام افراد افغان ہیں،افغان آئل ٹینکر ڈرائیور اپنی فیملی کے افراد کو بغیرویزا غیر قانونی طور پر ایران منتقل کرنا چاہتا تھا،جلد ڈی پورٹ کر دئیے جائیں گے ۔ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں نظر آنے والے تمام 15 بچے اور خواتین افغانی تھے اور ایک ہی خاندان سے تعلق رکھتے ہیں ۔ ویڈیو وائرل ہونے کے بعد دو دن سے سوشل میڈیا اور میڈیا پر پروپیگنڈہ ہوتا رہا کہ ایرانی سرحد پر پکڑے گئے آئل ٹینکر سے برآمد کئے جانے والے بچے خیبر پختونخوا کے مختلف علاقوں سے اغواء کئے گئے ہیں جن میں ایک بچی فرشتہ کا تعلق مردان سے بھی بتایا گیا جو 3 ماہ قبل اغواء ہوئی ہے۔ اس خبر کے بعد وزیر اطلاعات شوکت یو سفزئی ،انسپکٹر جنرل پولیس صلاح الدین محسود اور ڈی آئی جی مردان محمد علی گنڈا پور کافی سرگرم ہوگئے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں