آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
ہفتہ15؍ رجب المرجب 1440ھ 23؍مارچ2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن


جنسی ہراسانی کیس میں عدالت نے اداکارآلوک ناتھ کی قبل از گرفتاری کی ضمانت منظور کرلی۔

بالی ووڈ میں گزشتہ سال ’می ٹو مہم‘ عروج پر تھی جس کی زد میں سلمان خان اور امیتابھ بچن سمیت متعدد اداکار بھی آئے جب کہ پروڈیوسر اور مصنفہ ونتا نندا نے انڈسٹری میں ’’سنسکاری بابوجی‘‘ کے نام سے مشہور اداکار آلوک ناتھ کے خلاف جنسی ہراسانی کا الزام عائد کیا تھا، جس پر اداکارآلوک ناتھ نے ان الزامات کو رد کردیا۔

اداکار آلوک ناتھ نے مصنفہ کے خلاف ہتک عزت کا دعویٰ بھی دائر کیا تھا جس میں مصنفہ سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا گیا تھا تاہم عدالت نے ان کی درخواست ردکردی تھی، بعد ازاں ونتا نندا کے کہنے پر اداکار کے خلاف مقدمہ بھی درج کرلیا گیا تھا۔

رپورٹس کے مطابق آلوک ناتھ کے وکیل کی جانب سے ان کی گرفتاری کے خوف سے مقامی عدالت میں قبل از ضمانت درخواست دائر کی گئی جو عدالت کی جانب سے منظور کرلی گئی۔

واضح رہے کہ نوے کی دہائی کے مقبول ترین ڈراماسیریل’’تارا‘‘ کی پروڈیوسر اور مصنفہ ونتا نندا نے الوک ناتھ پر الزام لگاتے ہوئے کہا تھا کہ سنسکاری بابوجی نے انہیں زیادتی کا نشانہ بنایا تھا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں