آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر20؍ شوال المکرم 1440 ھ 24؍جون 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کا کہنا ہے کہ ملک میں مہنگائی اور بیروزگاری بڑھ گئی ہے۔

لاہورمیں مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ ماہ میں بھی حکومت فیصلہ نہیں کر سکی کہ آئی ایم ایف جانا ہے یا نہیں، 1400 ارب اسٹیٹ بینک سے لینے کا مطلب ہے کہ نوٹ چھاپے گئے ہیں۔ سمجھ نہیں آ رہی کہ حکومت ملک کو کس طرف لے جانا چاہتی ہے۔

مفتاح اسماعیل نے کہا کہ پی ٹی آئی رہنما ملک کےساتھ بہت ناانصافی کر رہے ہیں، یہ جھوٹ بول کر اپنی نااہلی چھپاتے ہیں۔ہم نے بجلی کا مسئلہ سلجھا دیا تھا،انہوں نے پھر بجلی کا مسئلہ کھڑا کردیا ہےجبکہ گروتھ ریٹ 6 فیصد سے کم ہوکر 3 فیصد تک آگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیب سے اچھے ماحول میں بات ہوئی ، کوئی غیرمعمولی سوال نہیں پوچھا گیا، مجھے ایک سوال نامہ دیا گیا ہے اس کا جواب جمعہ تک جمع کراؤں گا۔

سابق وزیر خزانہ نے کہا کہ ان کےپاس این آراو دینے کا اختیارہی نہیں،مشرف ڈکٹیٹرتھا اسلیے این آراو کیا۔ یہ تاثرختم ہونا چاہیے کہ یکطرفہ احتساب ہورہا ہے۔

اس کے علاوہ انہوں نے کہا کہ فوجی عدالتوں کے معاملے پر پارلیمنٹ میں بات ہوگی اوراگر حکومت فوجی عدالتوں میں توسیع کی وجوہات پرمطمئن کرسکی تو ساتھ دیں گے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں