آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعرات12؍شعبان المعظم 1440ھ 18؍ اپریل 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

روس کی میزبانی میں ماسکو میں افغانستان کے رہنمائوں کے درمیان ہونے والی کانفرنس کا پہلا دور جاری ہے۔

کانفرنس میں زیادہ تر وہ رہنما شریک ہیں جو کہ کابل حکومت سے اختلاف رکھتے ہیں۔

انٹرا افغان کانفرنس میں شریک طالبان کے وفد کے سربراہ عباس ستانکزئی نے کہا کہ طالبان امریکی فوج کے انخلا کے بعد سیاسی اجارہ داری نہیں چاہتے۔

طالبان رہنما نے کہا کہ کابل انتظامیہ کا لاگو کردہ آئین غیر قانونی اور امن کی راہ میں رکاوٹ ہے۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ طالبان رہنماؤں کا نام امریکی بلیک لسٹ سے نکلنا چاہیے۔

دوسری جانب امریکا اور افغان حکومت نے ماسکو کانفرنس پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے اس میں شرکت نہیں کی ہے۔

سابق افغان صدرحامدکرزئی نے کانفرنس سے خطاب میں کہا ہے کہ افغان عوام کےدرمیان یکجہتی سےہی جمہوری اور آزاد افغانستان حاصل کیا جاسکتا ہے۔

حامد کرزئی نے افغان امن عمل کے لیے امریکا کی کوششوں کا بھی خیر مقدم کیا۔

انہوں نے ماسکو کانفرنس کی زبردست پذیرائی کی اور کہا کہ افغان آپس میں بیٹھ کر ہی مستقل امن کا کوئی فارمولا تلاش کرسکتے ہیں۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں