آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعرات15؍ جمادی الثانی 1440ھ 21؍فروری 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن


چین کے شہر ہربن میں35واں سالانہ آئس اینڈ اسنو فیسٹیول زور و شور سے جاری ہے، جس میں 30 ہزار سے زائد سیاحوں نے شرکت کی۔

چین کے سرد ترین شہر ہربن میں برف کا یہ منفرد میلہ دنیا کے چار عظیم اسنو فیسٹیولز میں سے ایک ہے جس میں ہر سال چین اور دنیا بھر سے برف کے سینکڑوں مجسمہ ساز اور آرٹسٹ جمع ہوکر خوبصورت شاہکار تخلیق کرتے ہیں۔

اس مقصد کے لیے ورکرز نے ہربن کے دریا کی سطح سے برف کے 1لاکھ 50ہزار کیوبک میٹر کے دیوہیکل ٹکڑے کاٹ کر میلے کے مقام پر پہنچائے گئے اور محض 20 دن میں ایک سو سے زائد کئی میٹر بلند برف کے مجسمے تیار کئے گئے جنہیں خوبصورت روشنیوں سے بھی سجایا گیا ہے۔

رواں سال اس میلے کو حتمی شکل دینےکے لیے 10ہزارسے زائد ورکرز اورسینکڑوں آرٹسٹ میدان میں موجود ہیں اور 6لاکھ اسکوائر میٹر رقبے پر کئی میٹر اونچے ٹاورز اور شاندار آئس سلائیڈ کے علاوہ سینکڑوں برفیلے مجسمے تیار کرتے دکھائی دے رہے ہیں۔

یہ برفانی میلہ ہر سال تقریباً ڈیڑھ سے دو ماہ تک چین کے شہر ہربن میں جاری رہتا ہے جہاں فروری کے اختتام تک سیاحوں کی بڑی تعداد برف سے بنائے گئے مجسمے اورآرٹ کے انمول نمونے دیکھنے جمع ہوتی ہے۔

اس سال نئے قمری سال کا جشن مناتے ہوئے گزشتہ دنوں چینی باشندوں سمیت دنیا بھر سے 30ہزار سے زائد سیاحوں نے شرکت کی اور خوب انجوائے کیا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں