آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 12؍جماد ی الثانی 1440ھ 18؍فروری 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

سندھ کے وزیر بلدیات سعید غنی کہتے ہیں کہ عمران خان اور شیخ رشید کو اپنی اپنی فکر ہے، وزیر اعظم عمران خان کو آئی ایم ایف سے قرض لینے پر خودکشی اور شیخ رشید کو پی اے سی کی فکر ہے۔

بینکنگ کورٹ کراچی آمد کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ شیخ رشید کو نازک وقت میں خان کو پریشان نہیں کرنا چاہئے۔

وزیر بلدیات سندھ نے کہا کہ عمران خان کہتے تھے، کپتان جو کہتا ہے وہ کرتا ہے،ہم انہیں خود کشی سےزبردستی نہیں روکیں گے۔

انہوں نے کہا کہ علیمہ خان کی خفیہ جائیداد کی پوچھ گچھ نہیں کی جا رہی، انہیں این آر او دے دیا گیا ہے۔

سعید غنی کا مزید کہنا کہ رہائشی عمارتیں توڑنے پر استعفیٰ دینے کی بات پرآج بھی قائم ہوں،کراچی میں رہائشی عمارتیں توڑنا ممکن نہیں، البتہ جو شادی ہال رفاہی پلاٹ پر بنے ہیں وہ ضرور ٹوٹیں گے۔

انہوں نے کہا کہ رہائشی عمارتوں سے متعلق ہم اپنی گزارشات سپریم کورٹ لے کر جائیں گے، عدالتی احکامات کے ہم پابند ہیں اور ہم انہیں مان بھی رہے ہیں، غیر قانونی تعمیرات کے خلاف کارروائی جاری ہے۔

وزیر بلدیات سندھ نے کہا کہ کچھ عرصے پہلے نون لیگ سے نرمی اور پیپلز پارٹی سے الگ رویہ تھا، اب نون لیگ اور پیپلزپارٹی کے ساتھ رویہ مختلف ہے۔

انہوں نے کہا کہ جے آئی ٹی کی رپورٹ انتہائی مضحکہ خیز ہے، جے آئی ٹی نے سپریم کورٹ کے فیصلے کی بھی واضح خلاف ورزی کی ہے۔

سعید غنی نے کہا کہ سپریم کورٹ نے ہدایت کی تھی کہ جے آئی ٹی رپورٹ منظر عام پر نہ آئے، جس کے لیے سپریم کورٹ نے جے آئی ٹی کو اپنی کارروائی شیئر نہ کرنےکیلئے کہا تھا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہماری لیڈر شپ کےخلاف یک طرفہ ٹرائل کا نوٹس نہیں لیا گیا، جہانگیر ترین کے باورچی اور ڈرائیور کے نام پر اکاؤنٹ تو ثابت ہو چکے ہیں۔

سعید غنی نے ڈاکٹروں کی سندھ میں ہڑتال کے حوالے سے کہا کہ ڈاکٹروں کا یہ رویہ بلیک میلنگ ہے اس کی مذمت کرتا ہوں۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں