آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
بدھ18؍شعبان المعظم 1440ھ24؍ اپریل 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

صدرمملکت ڈاکٹر عارف علوی کا کہنا ہے کہ ہماری اصل جنگ غربت اور افلاس کے خلاف ہے۔

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے یوم پاکستان پر مسلح افواج کی پریڈ کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قوم کو یوم پاکستان مبارک ہو، آزادی کی نعمت دینے پر اللہ کا شکر ادا کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ برصغیر کے مسلمانوں نے آج کے دن تحریک آزادی کے سفر کا آغاز کیا، تمام ملکوں کی خود مختاری اور سلامتی کا احترام کرتے ہیں،امن کی خواہش کوہماری کمزوری نہ سمجھا جائے، پاکستان ایک حقیقت ہے، ہندوستان کو بھی اس حقیقت کو تسلیم کرنا ہوگا۔

صدرمملکت نے کہا کہ بھارتی جارحیت کا جواب دینا ہمارا فرض تھا، بہترحکمت عملی سے بھارت کوموثراورفوری جواب دیا،دشمن کو منہ توڑ جواب دیا، جمہوری ملک ہونے کے ناتے پاکستان مذاکرات پر یقین رکھتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم پرامن قوم ہیں مگر اپنے دفاع سے ہرگز غافل نہیں، بھارت کا رویہ غیرذمے دارانہ رہا ہے، بھارت نے دھمکی آمیز بیانات سے جنگ کی فضا قائم کی، پلوامہ حملے کے بعد بھارت نے بغیر ثبوت کے پاکستان پر الزامات عائد کیے۔

ڈاکٹر عارف علوی نے کہا کہ آزادی کا حصول قربانی کا متقاضی ہوتا ہے،دہشت گردی کے خلاف جنگ میں جانی و مالی قربانیاں دیں، آج پاکستان ابھرتی ہوئی معاشی قوت ہے، دہشت گردی دنیا کے امن کے لیے سب سے بڑا خطرہ ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ افغانستان میں امن پاکستان میں دائمی امن کے لیے ناگزیر ہے، امن کے لیے پاکستان اپنا کردار ادا کرتا رہے گا، دہشت گردی دنیا کے امن کے لیے سب سے بڑا خطرہ ہے۔

صدرمملکت کا یہ بھی کہنا ہے کہ آج کی پریڈ میں ہمارے دوست ممالک شانہ بشانہ ہیں، افغانستان کے عوام طویل جنگ سے نجات چاہتے ہیں، آج کی پریڈ پیغام دے رہی ہے کہ ہم پر امن ہیں۔

اس سے قبل صدر مملکت عارف علوی گھڑسوار دستوں کے ہمراہ بگھی میں سوار ہو کر پریڈ گراؤنڈ پہنچے، جس کے بعد صدرِ مملکت عارف علوی کو مسلح افواج کے دستوں نے سلامی پیش کی اور صدر نے مسلح افواج کی پریڈ کا معائنہ کیا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں