آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار 17؍ذیقعد 1440ھ21؍جولائی 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

یورپین دارالحکومت برسلز میں آج اسلام و فوبیا اور نسل پرستی کے خلاف ایک بڑا مظاہرہ کیا گیا جس میں مختلف این جی اوز ، انسانی حقوق کے کارکنوں اور مختلف سیاسی جماعتوں کے افراد نے کثیر تعداد میں شرکت کی ۔

یہ مظاہرہ نسل پرستی اور امتیاز کے خاتمے کے بین الاقوامی دن کی مناسبت سے کیا گیا تھا جس میں باحجاب خواتین سمیت مسلمانوں کی مختلف تنظیموں نے اسلامو فوبیا کے بڑھتے ہوئے رجحان کو موضوع بنا کر شرکت کی ۔

مظاہرین کی جانب سے اٹھائے گئے بینر پر One race- Human race" کوئی مذہب برانہیں" اور تمام انسان برابر ہیں جیسے کئی پیغامات درج تھے۔

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے مارچ میں شریک سینٹ جونز کمیون کے ترک نژاد مئیر امیر کیر ، سوشلسٹ پارٹی کی جانب سے برسلز پارلیمنٹ کیلئے پاکستانی نژاد امیدوار عامر نعیم ، کشمیر کونسل ای یو کے چیئرمین علی رضا سید اور مس عندلیب عباس نے کہا کہ پاپولسٹ سیاست کرنے والے سیاستدانوں کے باعث یورپ میں اسلامو فوبیا اور اسی سے جڑی ہوئی نسل پرستی ایک حقیقت ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ خطرہ ہے کہ نیوزی لینڈ جیسے واقعات یہاں بھی نہ ہوں اس لئے ضروری ہے کہ انسانوں کو تقسیم نہ ہونے دیا جائے اور نسل پرستی جیسے مسائل سے نمٹنے کے لئے مسلسل آواز بلند کی جاتی رہے ۔

واضح رہے کہ یہ مظاہرہ نارڈ اسٹیشن سے شروع ہوااور سینٹرل اسٹیشن کے پاس سے ہوتا ہوا شہر کے مارولین ایریا میں اختتام پذیر ہوا ۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں