آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعرات17؍رمضان المبارک 1440ھ 23؍مئی 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی (نیپرا)نے بجلی فی یونٹ قیمت میں 81 پیسے اضافے کی منظوری دیدی۔

سینٹرل پاور پرچیزنگ ایجنسی نے فی یونٹ بجلی 1 روپے 23 پیسے مہنگی کرنے کی سفارش کی تھی جس پر نیپرا نے 81 پیسے مہنگی کرنے کی منظوری دی ہے۔

نیپرا کا کہنا ہے کہ بجلی کی قیمت میں اضافے سے صارفین پر 5 ارب 20 کروڑ روپے کا اضافی بوجھ پڑے گا جب کہ بجلی کی قیمت میں اضافے کا اطلاق کے الیکٹرک پر نہیں ہوگا۔

نیپرا حکام کے مطابق فروری کی فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کی مد میں بجلی مہنگی کی گئی ہے۔

رواں برس 20 فروری کو نیپرا نے بجلی کی قیمت میں ایک روپے 80 پیسے کا اضافہ کیا تھا۔

واضح رہے کہ دو روز قبل وفاقی دارالحکومت میں تقریب سے خطاب میں وزیر خزانہ اسد عمر کا کہنا تھا کہ بجلی کی قیمتوں میں اضافے کا تعین نیپرا کرتا ہے اور اب بھی وہی کرے گا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں