آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 14؍رمضان المبارک 1440ھ20مئی 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

غزہ اور اسرائیلی حکام کے درمیان کئی روز سے جاری کشیدہ صورتحال کے بعد جنگ بندی کا معاہدہ طے پاگیا جبکہ کشیدگی کے دوران 24 فلسطینی شہید اور 4 اسرائیلی شہری مارے گئے۔

خبر ایجنسی کے مطابق حماس اور اسرائیل کے درمیان جنگ بندی میں مصر نے ثالثی کا کردار ادا کیا فلسطینی اور مصری حکام نے اس کی تصدیق بھی کی تاہم اسرائیل کی جانب سے اب تک کوئی ردعمل سامنے نہیں آیا۔

گزشتہ روز غزہ پر اسرائیل کی گولہ باری اور فضائی حملوں میں 4 ماہ کے بچے اور حاملہ خاتون سمیت 19 فلسطینی شہید ہوئے اور جمعے سے جاری اسرائیلی حملوں میں شہید فلسطینیوں کی تعداد 24 ہوگئی۔

اسرائیل نے الزام لگایا کہ غزہ سے حماس کی جانب سے 500 سے زائد راکٹ فائر کیے گئے جس کی زد میں آکر 4 شہری مارے گئے جس کے جواب میں غزہ میں 250 ٹارگٹ کیے گئے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اسرائیلی کارروائیوں کی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیل کو ایک بار پھر حماس اور اسلامی جہاد کے دہشت گرد راکٹ حملوں کا سامنا ہے، اسرائیل کے اپنے شہریوں کے دفاع میں کیے گئے اقدامات میں سو فیصد ساتھ کھڑے ہیں۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں