آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 14؍رمضان المبارک 1440ھ20مئی 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

تیسرے ایک روزہ بین الاقوامی میچ میں پاکستان نے انگلینڈ کو جیت کے لئے 359 رنز کا ہدف دیا ہے۔

امام الحق نے 151 اور آصف علی 52 رنز کی اننگز کھیلی۔

برسٹل میں کھیلے جارہے میچ میں انگلش ٹیم کے کپتان ایون مورگن نے ٹاس جیت کر پاکستان کو بیٹنگ کی دعوت دی، گرین شرٹس کے اوپنر پچھلے میچ کے مقابلے میں اس بار اچھا آغاز نہ دے سکے اور جلد ہی پہلی وکٹ گنوادی۔

دوسرے ون ڈے میں شاندار سنچری بنانے والے فخرزمان آج لمبی اننگز نہ کھیل سکے اور کرس ووکس کو وکٹ دے کر پویلین لوٹ گئے، وہ صرف 2 رنز ہی بناسکے۔

بابر اعظم بھی صرف 15 رنز بناکر ووکس کی گیند پر کلین بولڈ ہوگئے۔

دو وکٹیں جلد گرنے کے بعد امام الحق اور حارث سہیل نے ذمہ دارانہ بیٹنگ کی اور وکٹ گرنے کے سلسلے کو روکا اور ٹیم کا اسکور 95تک پہنچادیا، لیکن حارث سہیل رن لینے کی کوشش میں اپنی وکٹ گنوابیٹھے، وہ 41 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔

کپتان سرفراز لمبی اننگز نہ کھیل سکے اور 27رنز بناکر امام الحق کا ساتھ چھوڑ گئے۔

سرفراز کے بعد آصف علی بیٹنگ کے لئے آئے اور اپنے مخصوص انداز میں بیٹنگ کرتے ہوئے تیزی سے رنز بنائے اور 43 گیندوں پر 52رنز کی برق رفتار اننگز کھیلی۔

عماد وسیم نے لمبی اننگز تو نہ کھیلی لیکن صرف 12گیندوں پر 22رنز بناکر اسکور میں تیزی سے اضافہ کیا۔

فہیم اشرف 13 رنز بناکر آؤٹ ہوئے جبکہ حسن علی نے 18رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیلی۔

اس طرح پاکستان نے اننگز کے 50 اوورز کھیل کر 9 وکٹوں کے نقصان پر 358 رنز بنائے۔

انگلینڈ کی طرف سے ووکس نے چار، کرن نے دو، جبکہ ویلی اور پلنکیٹ نے ایک،ایک وکٹ حاصل کی۔

پاکستان کیخلاف انگلینڈ کی ٹاس جیت کر فیلڈنگ

انگلینڈ نے تیسرے ایک روزہ میچ میں ٹاس جیت کر پاکستان کو بیٹنگ کی دعوت دی ہے۔

پاکستانی ٹیم میں ایک تبدیلی کی گئی ہے، جنید خان کو یاسر شاہ کی جگہ میچ میں کھیلانے کا فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ فاسٹ بولر محمد حسنین کو اب تک سیریز میں موقع نہیں دیا گیا ہے۔

ٹاس کے بعد سرفراز احمد نے اعتراف کیا کہ اگر ہم بھی ٹاس جیتے تو پہلے فیلڈنگ کرتے،ٹیم کو بیٹنگ اور بولنگ کے معاملے پر مزید توجہ دینے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ شاداب خان انشاء اللہ ورلڈ کپ ٹیم میں واپس آئیں گے،عامر کے بارے میں یقین سے نہیں کہہ سکتے،پہلے انہیں چکن پاکس سے نجات پانی چاہیے۔

انگلینڈ کی طرف سے جیسن رائے، جونی بریسٹو، جو روٹ،بین اسٹوکس، معین علی، کپتان ایون مارگن، جوڈینلی، کرس واکس، ڈیوڈ ویلی، ٹوم کرن اور لیام پلنکٹ میدان میں اتر رہے ہیں۔

پاکستان کی فائنل الیون میں فخر زمان،امام الحق،بابر اعظم، حارث سہیل،کپتان سرفراز احمد، آصف علی، عماد وسیم،فہیم اشرف، حسن علی، جنید خان اور شاہین شاہ آفریدی پر مشتمل ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں