آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار 23؍ذوالحجہ 1440ھ 25؍اگست 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

وزیراعظم عمران خان کے مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ ایمنسٹی اسکیم پر پریس کانفرنس کے دوران شور شرابہ ہوا تو وہ اٹھ گئے۔

حفیظ شیخ اپنی بات مکمل کر کے اٹھ کھڑے ہوئے تاہم صحافیوں کے سوالات ختم نہ ہوئے۔

’ایمنسٹی اسکیم کا مقصد کالے دھن کو معیشت میں لانا ہے‘

وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے خزانہ...

مشیر خزانہ کے ساتھ ہی صحافی بھی باہر جانے لگے تو مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے انہیں روک لیا۔

مشیر اطلاعات نے صحافیوں سے کہا کہ وہ کوشش کریں گی کی حفیظ شیخ میڈیا کو دستیاب رہیں ۔

اس سے قبل مشیر خزانہ نے میڈیا کو بتایا کہ آئی ایم ایف ایگزیکٹیو بورڈ سے قرض کی منظوری میں ایک ماہ سے زیادہ لگ سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف سے مذاکرات اچھے انداز میں مکمل ہوئے،کچھ لوگوں کو خدشہ ہے کہ بجلی اور گیس قیمتیں بڑھیں گی لیکن ہم نے اس مشکل کو کم کرنے کے لیے 3سے4 فیصلے کیے ہیں۔

عبدالحفیظ شیخ نے مزید کہا کہ بجلی کی قیمت بڑھی تو 300یونٹ سےکم استعمال کرنےوالوں پر اثر نہیں پڑے گا جبکہ گیس کے بھی 40فیصد چھوٹے صارفین کو بچایا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ نئے مالی سال کا بجٹ 10یا11 جون کو پیش کیا جائے گا، جس میں ترقیاتی بجٹ کے لیے 700 سے 800 ارب روپے مختص کیے جائیں گے۔

مشیر خزانہ نے کہا کہ سرکاروں اداروں یا قرضوں کے نظام میں بہتری لانا پاکستان کے مفاد میں ہے،گزشتہ 5 سال برآمدات میں رتی برابر اضافہ نہیں ہوا، سرکاری اخراجات میں کمی وبرآمدات نہ بڑھنے تک معیشت آگے نہیں بڑھ سکتی۔

قومی خبریں سے مزید