آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر16؍محرم الحرام 1441ھ 16؍ستمبر 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

پائلٹس جعلی ڈگری کیس، 8 نظر ثانی و متفرق درخواستیں خارج

سپریم کورٹ آف پاکستان میں پی آئی اے پائلٹس کی جعلی ڈگری کے کیس کی سماعت ہوئی۔

جسٹس عظمت سعید کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی۔

سپریم کورٹ نے پی آئی اے کے 8 ملازمین کی نظرثانی ومتفرق درخواستیں خارج کر دیں۔

جسٹس عظمت سعید نے ریمارکس دئیے کہ عدالت اپنے فیصلے پر کیا نظر ثانی کرے، کیوں نہ نظر ثانی کر کے جعلی ڈگری والوں کے خلاف پرچہ درج کرنے کا حکم دیں، سپریم کورٹ کا مذاق بنایا ہوا ہے، عدالت کا ادب و احترام رہا ہی نہیں۔

درخواست گزار کے وکیل نے عدالت میں استدعا کی کہ عدالت نے جو حکم دیا اس کی غلط تشریح کی جا رہی ہے، متعلقہ عدالتیں سپریم کورٹ کے فیصلے کی وجہ سے ہماری بات سننے کو تیار نہیں۔

عدالت نے حکم دیا کہ متعلقہ عدالتیں قانون کے مطابق پی آئے اے کے ملازمین کی درخواستوں پر فیصلہ کریں۔

سپریم کورٹ میں شازیہ آفریدی، ثمینہ قریشی، عبد الرؤف بیگ، نذر خان،کامران خان، طاہرہ سلطانہ، ثناء گل اور شکیب شوکت نے درخواستیں دائر کی تھیں۔

دورانِ سماعت جسٹس عظمت سعید نے پی آئی اے کے وکیل عمر لاکھانی پر اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ تقریر کا شوق ہے تو کہیں اور جا کر کریں، آپ کو کیس کا پتہ نہیں ہوتا اور آ جاتے ہیں، جا کر دوبارہ لاء کالج میں داخلہ لیں۔

قومی خبریں سے مزید