آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
منگل21؍شوال المکرم 1440ھ 25؍جون 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

کراچی (اسٹاف رپورٹر) میئر کراچی وسیم اختر نے وزیراعظم پاکستان عمران خان سے مطالبہ کیا ہے کہ این ایف سی ایوارڈ کا کراچی و حیدرآباد کا حصہ براہ راست بلدیاتی اداروں کو دیا جائے کراچی کے لئے خصوصی مالی پیکیج کی ضرورت ہے کیونکہ 18ویں ترمیم نے کراچی، حیدرآباد کو تباہ کردیا، سندھ حکومت این ایف سی ایوارڈ کی رقم ڈسٹرکٹ کو منتقل نہیں کررہی، ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کو گجر نالے کی صفائی کے معائنے کے موقع پر کیا ، اس موقع پر ڈسٹرکٹ سینٹرل کے چیئرمین ریحان ہاشمی، میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹر سید سیف الرحمٰن، بلدیہ عظمیٰ کراچی کے افسران اور منتخب نمائندے بھی موجود تھے، میئرنے کہا کہ موسم کی تبدیلی کے باعث شہر کے تمام بڑے نالوں کی ہنگامی بنیادوں پر صفائی کا کام جاری ہے، گجر نالے پر زیادہ خطرہ ہوتا ہے تاہم اس کی مکمل صفائی کی جاچکی ہے ، انہوں نے کہا کہ یہ مسئلے کا حل نہیں، شہر سے کچرا اٹھانے کی ذمہ دارسندھ حکومت ہے جب تک حکومت ان ذمہ داریوں کو پورا نہیں کرتی یہ مسئلہ باقی رہے گا، میئر کراچی نے کہا کہ وفاق

نے جو بجٹ میں کراچی کے لئے 45.5ارب روپے مختص کئے ہیں اس پر بھی ہمیں افسوس ہوا، کراچی میں آج جتنے مسائل ہیں ان کے لئے اس سے زیادہ پیکیج کی ضرورت ہوگی۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں