آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
بدھ13؍ذیقعد 1440ھ 17؍جولائی 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے 5 اوورز میں 136 رنز بنانے کا ہدف پاکستان کو دینے کے فیصلے کادفاع کرتے ہوئے کہا کہ میچ شروع کر کے ٹیم پاکستان کو رن ریٹ بہتر بنانے کا موقع فراہم کیا گیا تھا۔

پاکستان اور بھارت کے درمیان بارش سے متاثرہ میچ کا اختتام ڈک ورتھ لوئس سسٹم کے تحت ہوا، بارش کی وجہ سے جب کھیل رکا تو اس وقت پاکستان نے 35 اوورز میں 6 وکٹوں پر 166 رنز بنائے تھے۔

اگر اس وقت میچ ختم قرار دے دیا جاتا تو پاکستان ٹیم ڈک ورتھ لوئس سسٹم کے تحت 86 رنز سے ہار جاتی ، تاہم بارش تھمتے ہی امپائرز نے میچ شروع کرنے کا اعلان کیا اورپاکستان کو 5 اوورز میں 136 رنز کا ہدف ملا۔

سسٹم کے تحت ریوائز ٹارگٹ 40 اوورز میں 302 رنز کا رہا یعنی ایک اوور میں 28 رنز کی اوسط درکار تھی جس پر ماہرین نے کڑی تنقید کی۔

اس تنقید کے جواب میں انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کا کہنا ہے کہ ٹاپ فور میں آنے کے لیے رن ریٹ بڑی اہمیت کا حامل ہے، میچ کو ختم کر دینا ایک اچھا فیصلہ نہ ہوتا۔

آئی سی سی کے مطابق میچ شروع کر کے ہم نے پاکستان کو رن ریٹ بہتر بنانے کا موقع فراہم کیا اور ریوائز ٹارگٹ ڈک ورتھ لوئس سسٹم کے تحت سے ہی دیا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں