آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار 16؍ذوالحجہ 1440ھ 18؍اگست 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

گھریلو تشدد کے معاملے میں اداکار محسن عباس اور اہلیہ فاطمہ سہیل ایس پی کینٹ کے دفتر میں پیش ہوگئے۔

پولیس کا کہنا ہے فریقین کا موقف سن لیا ہے، انکوائری کی جارہی ہے، جو حقائق سامنے آئيں گے ان کے مطابق قانونی کارروائی کی جائے گی۔

فاطمہ سہیل نے شوہر محسن عباس کے خلاف تشدد کی درخواست دے رکھی ہے۔

تفتیشی افسر کا کہنا ہے کہ پولیس نے دونوں پارٹیوں کو بیان قلمبند کروانے کے لئے طلب کیا تھا، فریقین کا موقف سننےکے بعد فاطمہ سہیل کی درخواست پر فیصلہ ہوگا۔






محسن عباس اور فاطمہ سہیل کا موقف سننے کے بعد ایس پی کینٹ، رضا صفدر کاظمی نے کہا ہے کہ ابھی معاملے کی انکوائری کررہے ہیں، حقائق سامنے آنے پر قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔

ایس پی کینٹ لاہور کے دفتر میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے محسن عباس کی اہلیہ فاطمہ سہیل نے کہا کہ محسن نے ان سے ایک کروڑ کا مطالبہ کیا تھا، انہیں پچاس لاکھ روپے دیئے گئے، وہ بھی معلوم نہیں کہاں خرچ ہوئے۔

فاطمہ سہیل نے کہا کہ ان پر تشدد کیا گیا ہے، لیکن بال کھینچنے اور تھپڑ مارے جانے کا میڈيکل سے کیسے ثابت ہوگا، پولیس نے اب تک ایف آئی آر بھی درج نہيں کی۔





اداکار محسن عباس کا کہنا تھا کہ پولیس حکام کے سامنے ان کی
پہلی نشست بہت مثبت رہی، آخر کار یہ گھریلو معاملہ ہے، وہ اپنی فیملی اور وکیل سے مشورے کےبعد اگلا لائحہ عمل طے کریں گے۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید