آپ آف لائن ہیں
پیر2شوال المکرم1441ھ25؍مئی 2020ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
تازہ ترین
آج کا اخبار
کالمز

حسن علی کی فٹنس پر اظہر محمود کے الزامات مسترد

پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق بالنگ کوچ اظہر محمود کا مؤقف ہے کہ فاسٹ بالر حسن علی کرکٹ کھیلتے ہوئے نہیں بلکہ زیادہ وزن اٹھانے کے سبب فٹنس مسائل سے دوچار ہوئے۔

45 سال کے اظہر محمود جنہوں نے پاکستان کے لیے 21ٹیسٹ 143ون ڈے کھیلے، انہوں نے دائیں ہاتھ کے تیز بالر حسن علی کے ان فٹ ہونے کی براہ راست ذمہ داری چیف سلیکٹر اور ہیڈ کوچ مصباح الحق پر ڈالتے ہوئے کہا تھا کہ حسن علی سے ان کی قوت سے زیادہ 130کلو گرام وزن جم سیشن میں اٹھوایا گیا جو ان کے ان فٹ ہونے کا سبب بنا۔

اس بابت جب قومی ٹیم کے بالنگ کوچ وقار یونس سے سوال پوچھا گیا تو انہوں نے بتایا کہ اظہر محمود کا یہ بیان ان کے لیے خاصا حیرانگی کا سبب ہے، جس کی وہ مکمل طور پر تردید کرتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ بات وہ نہیں مانتے کہ حسن علی کو مصباح الحق نے زیادہ وزن اٹھانے کو کہا اور پھر وہ ان فٹ ہوگئے۔

حسن علی کے سوال پر وقار یونس نے بتایا کہ دائیں ہاتھ کے تیز بالر کی قومی ٹیم میں جگہ تو بنتی ہے البتہ اس کے لئے انہیں فٹنس کو ثابت کرنا ہوگا، قومی ٹیم کے بالنگ کوچ نے مزید کہا کہ حسن علی ایک ایسے متحرک بالر ہیں جنہیں وہ خود بہت پسند کرتے ہیں۔

 2017ء میں آئی سی سی چیمپئینز ٹرافی میں 13وکٹ پانچ میچ کھیل کر بہترین بالر کا اعزاز حاصل کرنے والے حسن علی نے پاکستان سپر لیگ میں پشاور زلمی کے لیے 9 میچ کھیل کر آٹھ وکٹیں حاصل کیں تاہم فٹنس مسائل کے باعث وہ قومی ٹیم سے قریباً ایک سال سے دور ہیں۔

یاد رہے حسن علی نے پاکستان کے لیے آخری ون ڈے 16جون 2019ء کو اولڈٹریفورڈ مانچسٹر میں بھارت کے خلاف کھیلا تھا۔

آئی سی سی ورلڈ کپ کے اس میچ میں حسن علی 9 اوورز میں 84 رنز دے کر روہت شرما کی ہی وکٹ لے سکے تھے، سرفراز احمد کی قیادت میں آئی سی سی ورلڈ کپ 2019ء میں حسن علی کو صرف چار میچ کھلائے گئے، جہاں وہ 128کی بھاری اوسط سے صرف دو ہی وکٹ لے سکے تھے۔

کھیلوں کی خبریں سے مزید