• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

بلدیاتی مسائل کے حل کیلئے اب وزیر اعلیٰ ہاؤس پر دھرنا ہوگا، حافظ نعیم

کراچی (اسٹاف رپورٹر) امیرجماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمٰن نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی گزشتہ 30سال سے سندھ پر حکومت کررہی ہے، کراچی کے شہریوں کے ساتھ ظلم و زیادتی،ناانصافی اور حق تلفی میں پیپلزپارٹی اور صوبائی حکومت برابر کی شریک ہے، کے الیکٹرک سے نجات سمیت کراچی کے تین کروڑ سے زائد عوام کے جائز و قانونی حقوق اور بلدیاتی مسائل کے حل کے لیے اب ہمارا دھرنا وزیر اعلیٰ ہاؤس پر ہوگاجس کی تفصیلات مشاورت کے بعد جلد جاری کردی جائیں گی، ہم اہل کراچی کی مزید حق تلفی نہیں ہونے دیں گے، وزیر اعلیٰ ہاؤس پر دھرنے میں صوبائی حکومت سے پوچھیں گے کہ کراچی کے عوام کے ساتھ یہ ظلم و زیادتی و ناانصافی مزید کتنا عرصہ جاری رہے گی،ہمارا مطالبہ ہے کہ کراچی میں کم از کم 700یونین کمیٹیاں بنائی جائیں تب ہی نئی حلقہ بندی قبول کریں گے ورنہ جماعت اسلامی احتجاج کرے گی، ہم الیکشن کمیشن سے بھی کہتے ہیں کہ اگر پیپلز پارٹی کے اثر اور دباؤ پر کوئی کراچی دشمن فیصلہ کیا گیا تو اسے قبول نہیں کریں گے اور الیکشن کمیشن کے خلاف بھی احتجاج کریں گے، ہمارا مطالبہ ہے کہ کراچی اور حید آباد کے نوجوانوں کو بھی روزگار دیا جائے، غاصبانہ بلدیاتی ایکٹ کے ذریعے عوام کے حق پر ڈاکہ ڈالا گیا ہے،کراچی کے بلدیاتی انتخابات کے خلاف اگر کوئی بلدیاتی ایکٹ لانے کی کوشش کی گئی تو جماعت اسلامی زبردست احتجاج کرے گی،انہوں نے کہاکہ کراچی ٹرانسفارمیشن پلان کے نام پر عوام کو دھوکہ دیا جا رہا ہے۔

شہر قائد/ شہر کی آواز سے مزید