| |
Home Page
پیر 28 ذیقعدہ 1438ھ 21 اگست 2017ء
May 20, 2017 | 12:00 am
بلااجازت پولیس کے بغیررینجرز کے چھاپےپر وزارت داخلہ کو نوٹس، اختیارات واپس لینے کی وارننگ، ڈی جی رینجرزکو خط

Todays Print

اسلام آباد (آئی این پی‘صباح نیوز)وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے بلااجازت اورپولیس کے بغیر اسلام آباد میں ہاؤسنگ سوسائٹی ٹاپ سٹی پر رینجرزکے چھاپے کا نوٹس لے لیا۔ذرائع کے مطابق ہاؤسنگ سوسائٹی میں پنجاب رینجرز کی کارروائی پر وزارت داخلہ نے ڈی جی رینجرز پنجاب سے وضاحت طلب کر لی۔ ڈی جی رینجرز کو لکھے گئے خط میں استفسارکیاگیاہے کہ رینجرز نے کس قانون کے تحت نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کے خلاف کارروائی کی ؟ گرفتاریاں کیسے کی گئیں ؟۔کیا رینجرز نے کارروائی سے قبل مقامی پولیس اور انتطامیہ سے اجازت لی تھی ؟۔ذرائع کے مطابق وزارت داخلہ نے ڈی جی رینجرز کو گزشتہ ایک ہفتے کے دوران تین خطوط ارسال کئے تاہم رینجرز نے سرد مہری دکھائی اور تاحال جواب نہیں دیا۔ ذرائع کے مطابق گزشتہ روز لکھے گئے خط میں ڈی جی رینجرز پنجاب سےآئندہ پیر تک جواب طلب کیا گیا ہے۔ جواب نہ دینے کی صورت میں رینجرزکے اختیارات واپس لینے کی بھی وارننگ دی گئی ہے‘ ذرائع کا کہنا ہے قانون کے مطابق رینجرز کو پولیس کی اجازت کے بغیر چھاپہ مارنے کا اختیار نہیں‘ کسی بھی چھاپے کے لئے رینجرز کو ضلعی انتظامیہ سے منظوری لینا ضروری ہوتی ہے۔صباح نیوزکے مطابق وزارت داخلہ نے ڈی جی پنجاب رینجرز کو مراسلہ ارسال کیا ہے کہ اگر رینجرز نے چھاپے کی وجہ نہ بتائی تو اسے واپس بھیج دیا جائے گا۔وزارت داخلہ کے جاری کردہ مراسلہ میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ رینجرز کو پولیس کے بغیر چھاپہ مارنے کا اختیار نہیں ہے‘قانون کے مطابق کسی بھی چھاپے کے لئے رینجرز کو ضلعی انتظامیہ سے منظوری لینا ضروری ہے۔وزارت داخلہ کے مطابق وزیرداخلہ چوہدری نثار کی منظوری سے ڈی جی رینجرز پنجاب کو 15اور17مئی کو بھی مراسلے بھیجے گئے مگر جواب نہ آیا۔ٹی وی رپورٹ کے مطابق ذرائع وزارت داخلہ نے کہا ہے کہ اگر پیر22 مئی تک جواب نہ آیا تومفاد عامہ میں رینجرز کو واپس بھیج دیں گے۔