چھ ستمبر ، جب لاہور میں ناشتہ کرنے کی بھارتی امیدوں پر پانی پھیرگیا

August 30, 2018
 

چھ ستمبر1965ء جب بھارت نےرات کی تاریکی میں جنگ کا اعلان کئے بغیرسرحد عبور کرکے لاہور فتح کرنے کی ٹھانی اور یہ منصوبہ بنایاکہ ناشتہ لاہور جم خانہ میں جاکرکیاجائےگا ۔۔۔لیکن انہیں کیا پتہ تھا کہ پاک دھرتی کے سپوت حملہ کرنے والی بھارتی افواج کو ایسا ناشتہ کرائیں گے کہ وہ رہتی دنیا تک اس کا ذائقہ بھول نہیں پائےگا۔

جنگِ ستمبر1965ءجواں عزم، دلیری، بہادری اور سرفروشی کی وہ عجیب داستاںہےجس میںپاک فوج کےجری اور بہادر جوانوں نے رات کی تاریکی میں چھپ کر وار کرنے والےدشمن کےدانت کھٹےکر دیئےتھے۔

قوم کےسپوت میجرعزیز بھٹی برکی سیکٹرپرکمپنی کمانڈرتھے،وہ دشمن کےٹینکوں کےسامنے5دن اور5 راتیں سیسہ پلائی دیوار بنے رہے، 12ستمبر کو بھارتی ٹینک کا ایک گولہ سینےمیں آلگاجس کے ساتھ ہی میجرعزیزبھٹی وطن پر جاں نثارکرگئے۔

پاک فوج نےجنگِ ستمبر میں وطن عزیز کےچپے چپےکا دفاع جس بہادری سےکیا وہ تاریخ کاایک روشن باب ہے،جنگ باروداورخاک و خون کا ہیبت ناک کھیل جسے زندہ دلانِ لاہور نےواقعاًایک کھیل سمجھ لیا ان کا یہ جذبہ دیکھ کر دشمن کی ہوائیاں اُڑ گئیں۔

بھارتی فوج کا منصوبہ تو یہ تھا کہ 6ستمبر کی صبح لاہور کے مال روڈ پراپنےوزیراعظم کوسلامی دےگی اور شام کو جم خانہ میں کاک ٹیل پارٹی کرے گی مگرپاک فوج نے ان کے تمام ناپاک منصوبے خاک میں ملادیئے۔


مکمل خبر پڑھیں