’’ملکی مفاد میں بہت سے معاملات پر خاموشی اختیار کی‘‘

September 11, 2018
 

پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما سید خورشید شاہ کہتے ہیں کہ ملکی مفاد میں بہت سے معاملات میں خاموشی اختیار کی، پارلیمنٹ میں اپنا کردار ادا کرتا رہوں گا۔

سید خورشید شاہ نے سکھر میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ماضی کی طرح پھر سےٹیکس لگائے جا رہے ہیں، بجلی کی قیمتوں میں اضافہ کیا جا رہا ہے،انتخابی نتائج کو پہلے بھی ماننے سے انکار کیا، اب بھی کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ مبینہ انتخابی دھاندلی کے باوجود حکومت کو تسلیم کیا، سب کو کہتا ہوں کہ پارلیمنٹ میں آئیں، وزیراعظم نے بھی پارلیمانی کمیٹی بنانے کا اعلان کیا، سیاست میں پارلیمنٹ کو ہمیشہ ترجیح دی ہے۔

خورشید شاہ نے کہا کہ ہمارے زمانے میں تیل کی قیمت 110روپے لیٹر مگر امپورٹ 36 ارب ڈالر تھی،اس وقت 38 ارب ڈالر کا خسارہ ہے۔

سینئر رہنما پی پی پی نے مزید کہا کہ ڈیم کے معاملے پر سیاست ہورہی ہے، میں پہلے دن سے ڈیم کا حامی ہوں کہ بننے چاہئیں، ڈیم بننے سے پاکستان اوپر جائے گا۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہر چیز سامنے لے کر آجاتے ہیں،یوٹرن کا سسٹم اب ختم ہونا چاہیے،حکومت کی چادر گھٹنے سے بھی اوپر ہے۔


مکمل خبر پڑھیں