آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار 23؍ذوالحجہ 1440ھ 25؍اگست 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

ماہرین نےدفتری معاملات اور مالی پریشانیوں کو ملازمین میں نفسیاتی دباؤ کی بڑی وجہ قرار دے دیا، زیادہ پریشانیاں نوکری پیشہ افراد کی موت کا باعث ہوسکتی ہیں ۔

خلیجی میڈیا کے مطابق ماہرین نفسیات نےخبردار کیا ہے کہ متحدہ عرب امارات میں نوکری پیشہ افراد کی تشویشناک حد تک بڑی تعداد ذہنی دباؤ، بے چینی اور مایوسی جیسے نفسیاتی مسائل کا شکار ہے۔

اماراتی کمپنیاں اپنے ملازمین کی ذہنی صحت کے لئے مناسب اقدامات نہیں کررہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ مالکان کو یہ سمجھنا ہوگا کہ ان کا سب سے بڑا اثاثہ ان کے ملازمین ہیں،ذہنی صحت جسمانی صحت اور عملے کی کارکردگی پر اثر انداز ہوتی ہے۔

ذہنی دبائو سے متعلق آگاہی کے مہینے اپریل میں ماہرین کا کمپنی مالکان کو مشورہ تھا کہ عملے کی کارکردگی کو بہتر بنانا ہے تو انہیں ذہنی و نفسیاتی دبائو سے دور رکھیں، معاون بحالی پروگرام شروع کئے جائیں۔

صحت سے مزید
خاص رپورٹ سے مزید