آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 13؍شوال المکرم 1440ھ17؍جون 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

فرانس کے شہر کانز میں جاری فلمی دنیا کے سب سے بڑے میلے ’کانز فلم فیسٹول ‘ میں مختصردورانیے کی پاکستانی فلم ’رانی‘ کی اسکریننگ کی جائے گی۔


مختصر فلم ’رانی ‘ میں پاکستان کی خواجہ سرا ماڈل و اداکار کامی سڈ نے مرکزی کردار ادا کیاہے۔ فلم میں خواجہ سراؤں کو پیش آنے والے مسائل پر روشنی ڈالی گئی ہے۔


کامی سڈ کی فلم ’ رانی ‘کی کہانی کراچی کی سڑکوں پر کھلونے فروخت کرنے والے خواجہ سرا کی زندگی پر مبنی ہے جو ایک لاوارث بچے کوگود لے کر اُس کی پرورش کرتا ہے اور اُسے معاشرے کے لیے اچھی مثال بنا کر پیش کرتا ہے۔

واضح رہے اس سے قبل پاکستانی فلم’رانی‘ کی گزشتہ برس اکتوبر میں امریکی شہر لاس اینجلس میں منعقد بین الاقوامی شہرت یافتہ ’این بی سی یونیورسل شارٹ فلم فیسٹول ‘ میں بھی نمائش کی گئی تھی۔ فیسٹیول میں 3500 فلموں میں سے 6 کا انتخاب کیا گیا تھا، پاکستانی فلم رانی بھی ان فلموں میں شامل تھی۔

فلم کے ہدایت کار امریکا سے تعلق رکھنے والے حماد رضوی ہیں جبکہ اسے گرے ہاؤس پروڈکشن کی جانب سے پیش کیا گیا ہے۔

کامی سڈ نے ماڈلنگ کا آغاز 2016ء میں کیا، جس کے بعد وہ 2017 میں اداکاری کے شعبے میں آگئیں، جہاں لوگوں کی جانب سے ان کی اداکاری کو سراہا گیا، ’رانی‘ ان کی پہلی مختصر فیچر فلم ہے جس میں انہوں نے ایک حقیقی کردار ہی ادا کیا ہے۔

کامی سڈ پاکستان کی پہلی ٹرانس جینڈر ہیں اُن کا ماننا ہے کہ اب ہمارے معاشرے میں بہتری آرہی ہے اس لیے جنس تبدیل کروانے والوں کو بھی ہر شعبے میں کام دیا جارہا ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں