آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر2؍ربیع الثانی 1440ھ 10؍دسمبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
بہت کام آئے ادرک کی چائے

برطانیہ میں ہونے والی تحقیق کے مطابق ادرک کی چائےذہنی دباؤکم کرکے موڈ پر خوشگوار اثرات مرتب کرتی ہے ۔ ادرک کا استعمال صحت کے لیے بھی انتہائی مفید ہے اور یہ ذہنی دباؤ کو کم کرنے کے ساتھ ساتھ نظام انہظام کو بھی درست ہونے کا سبب بنتا ہے ۔ ماہرین نے ادرک کی چائے کا استعمال خواتین کے لئے زیادہ مفید قرار دیا ہے ۔

بہت کام آئے ادرک کی چائے

آپ اپنی صحت کی خرابی کی وجہ سے پریشان ہیں تو فوراًادرک والی چائے بنائیں اور باقاعدگی سے اس سے لطف اٹھائیں کیونکہ یہ پیٹ درد، سردی ،جلن یا سانس کی بیماری سے نجات دلاتی ہے۔ ادرک میں موجودوٹامن سی، میگنیشیم اور منرلز انسانی جسم کے لئے انتہائی مفید ہیں۔ آئیے آپ کو اس کے چند فوائد کے بارے میں تفصیل سے بتاتے ہیں۔

قے سے نجات

اگر آپ کو سفر کے دوران تھکاوٹ اور قے کی شکایت ہے تو سفر شروع کرنے سے پہلے ادرک کی چائے پی کر سفر شروع کریں کیونکہ اس سے آپ ان مسائل سے بچے رہیں گے۔

معدے کی بہتری کے لئے

ادرک میں موجو میگنیشیم انسانی معدے کے لیئے انتہائی مفید ہے۔ اگرآپ کو معدے میں جلن یا کھانے کے بعد تکلیف ہو تو ادرک والی چائے پئیں اور اپنی تکلیف سے نجات پائیں۔

سانس کی تکلیف کے لئے

اگر آپ سردی کی وجہ سے سانس لینے میں مشکل محسوس کر رہے ہیں تو ایک کپ ادرک کی چائے روزانہ استعمال کریں اور سانس کی دشواری سے چھٹکارہ پائیں۔

مخصوص ایام

ان ایام میں خواتین کو کافی دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے لہذا اگر وہ ایک کپ ادرک والی چائے میں شہد ملا کر پئیں تو کافی سکون ملے گا ۔اس کے ساتھ ادرک والے گرم قہوہ میں کپڑا گیلا کر کے پیٹ کے نیچے لگانے سے درد سے بھی نجات ملے گی۔

ذہنی دباؤ سے نجات

ادرک کی چائے میں ایسے اجزاءپائے جاتے ہیں جن سے جسم کو آسودگی ملتی ہے اور ہم ذہنی تناؤ سے بچ سکتے ہیں۔

دوران خون کی بہتری

ادرک میں موجود وٹامنز، لحمیات اور امینو ایسڈ کی بدولت خون صاف رہتا ہے اور اس میں ٹیومرز نہیں بنتے جس کے ذریعے انسان دل کی بیماریوں سے محفوظ رہتا ہے۔

قوت مدافعت میں بہتری

ادرک میں موجو انٹی آکسیڈنٹس کی بدولت انسانی جسم کی قوت مدافعت مضبوط ہو جاتی ہے لہذا ادرک والی چائے کا استعمال کریں اور بیماریوں سے محفوظ رہیں۔

بہت کام آئے ادرک کی چائے

ادرک کی چائے بنانے کا طریقہ

ایک برتن میں دو کپ تازہ پانی ڈالیں اور اسے چولہے پر رکھ دیں ۔ جب پانی ابلنا شروع ہوجائے تو اس میں ادرک ڈال کر مزید دس منٹ تک جوش دینے کے بعد اتار لیں ۔

چولہے سے اتارنے کے بعد چائے کو تھوڑا ٹھنڈا ہونے دیں ، یعنی جب چائے نیم گرم ہو جائے تو اس میں دو چمچ شہد اور ایک چائے کا چمچ لیموں کا رس ملالیں۔

جوڑوں کی سوجن کے لئے

جسم میں زہریلے کودے کے رکنے سے جسم میں سوجن ہونا شروع ہوجاتی ہے لیکن اگر آپ ادرک والی چائے کا استعمال شروع کردیں تو اس سے نجات مل جائے گی۔اس طرح آپ جوڑوں کے درد سے محفوظ رہیں گے جبکہ آپ کے پٹھے بھی مضبوط ہو جائیں گے۔

آپ کی چائے تیار ہے۔

احتیاط

یاد رکھیں کہ ادرک کی چائے کی تاثیر گرم ہوتی ہے ۔ اس لیے چائے میں ادرک کی مناسب مقدار ڈالیں ۔ آپ کی چائے میں جتنی زیادہ ادرک ہوگی اتنی ہی تاثیر اس کی گرم ہوگی ۔اسی لئے یہ چائے پانچ سال سے کم عمر بچوں اور مریضوں کو نہیں دینی چاہئے۔

ادرک کے دیگر فوائد

ادرک میں پایا جانے والے ’جنجرولز‘ نامی مادہ اس کے ترش ذائقے کا سبب ہے لیکن یہ ادرک کے طبی فوائد کا باعث بھی ہے۔ انہی طبی فوائد کے باعث ادرک کو روایتی اور غیر روایتی طریقہ علاج میں بھی استعمال کیا جاتا ہے۔

تازہ ادرک کے علاوہ اس کی چائے بھی مارکیٹ میں دستیاب ہوتی ہے اور کئی ممالک میں میڈیکل اسٹورز پر ادرک کی گولیاں بھی مل جاتی ہیں۔

طبی ماہرین کے مطابق انسانی نظام ہضم کو بہتر بنانے میں ادرک کافی معاون ثابت ہوتا ہے۔ جنجرولز کی انسداد سوزش کی خاصیت کے باعث بھی اسے استعمال میں لایا جاتا ہے جو پٹھوں کا درد ختم کرنے کے لیے کارآمد ہوتا ہے۔

ادرک کا استعمال ’بلڈ شوگر‘ میں بھی کمی لاتا ہے، جس کے باعث خاص طور پر ذیابیطس کے مرض میں مبتلا افراد کے دل کی مختلف بیماریوں میں مبتلا ہونے کے خطرات بھی کم ہو جاتے ہیں۔

علاوہ ازیں کولسٹرول کی سطح میں کمی اور متلی اور ابکائی کے علاج کے لیے بھی ادرک کا استعمال انتہائی سود مند ثابت ہوتا ہے۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں