آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
پیر 14؍جمادی الاوّل 1440ھ 21؍جنوری2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

میئر کراچی وسیم اختر کا کہنا ہے کہ کراچی میں تجاوزات کیخلاف آپریشن جاری رہے گا، آج فاروق ستار سمیت وہ لوگ کہیں نظر نہیں آ رہے جو آپریشن سے متعلق عوام میں غلط فہمیاں پھیلا رہے تھے۔

سپریم کورٹ کراچی رجسٹری کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے میئر کراچی نے کہا کہ جو کر چکے ہیں اور جو کرنے جا رہے ہیں اس کا پلان سپریم کورٹ میں جمع کرا دیا ہے جس پر اعلیٰ عدالت کا واضح حکم بھی آگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم کسی کو تکلیف نہیں پہنچانا چاہتے چاہے وہ کوئی بھی زبان بولتا ہو اور نہ ہی کسی کا کاروبار ختم کرنا چاہتے ہیں۔

میئر کراچی وسیم اختر نے کہا کہ جب سپریم کورٹ حکم کردیتا ہے تو ہر ادارہ اس کے تابع آجاتا ہے، قبضہ کرنے والوں اور مافیا سے واگزار کرائے گئے مقامات پر دوبارہ نہیں آنے دیں گے، جو کرائے پر تھے ان کا انتظام کریں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ متاثرین کے معاوضے کے لیے کے ایم سی جائزہ لے گی،جبکہ غیر قانونی شادی ہالز، نالوں پر عمارات کے خلاف بھی کارروائی کریں گے۔

وسیم اختر نے کہا کہ سیاست چمکانے اور لوگوں کو کنفیوز کر نے والے ، ٹی وی پر بیٹھ کر چیخنے والے پی ٹی آئی کا کوئی نظر آیا اور نہ فاروق ستار نظر آئے جو رونا رو رہے تھے کہ میئر اور کے ایم سی نے ظلم کردیا۔

انہوں نے کہا کہ آج جماعت اسلامی کہاں ہے، یہ مگر مچھ کے آنسو تھے اور عوام کو بے وقوف بنانا تھا۔

میئر کراچی وسیم اختر نے بتایا کہ شہر کے 6 اضلاع میں تجاوزات کی نشاندہی کرلی ہے جس کے خلاف ترتیب وار کارروائی کی جائے گی اور اس دوران فلاحی پلاٹوں پر قبضے کو بھی ختم کرایا جائے گا، جبکہ تجاوزات والے مکانات کے خلاف کارروائی سے پہلے 30 روز کا نوٹس دیا جائے گا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں