• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

27 اکتوبر کشمیر کی تاریخ کا سیاہ ترین دن ہے، محمد غالب

برمنگھم(پ ر) 27اکتوبر کشمیر کی تاریخ کا سیاہ ترین دن ہے ،کشمیریوں نے بھارت کے غاصبانہ قبضہ کو تسلیم نہیں کیا، کشمیر ی 10 لاکھ بھارتی درندہ صفت فوج کے خلاف برسرپیکار ہیں، بھارت کے بے پناہ مظالم کے باجود کشمیرری میدان میں ڈٹے ہوئے ہے، پوری دنیا میں 27 اکتوبر یوم سیاہ کے طور پر منا کر بھارت کو یہ پیغام دیا جاتا ہے کہ کشمیریوں نے بھارت کے قبضے کو مسترد کردیا ہے، کشمیریوں کی قربانیاں رنگ لائیں گی بھارت کو آخر کشمیر سے نکلنا پڑے گا، ان خیالات کا اظہار تحریک کشمیر یورپ کے صدر محمد غالب نے یوم سیاہ کشمیر کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ اس موقع پر دنیا کے کونے کونے سے ایک ہی نعرہ بلند ہوگا کہ بھارت انسانیت کا دشمن دہشت گرد ملک ہے نریندر مودی کے ناپاک عزائم اور منصوبے اپنے مقاصد میں کامیاب نہیں ہوں گے لاکھوں کشمیریوں کی قربانیاں رنگ لائیں گی بھارت دنیا میں ذلیل اورکشمیر سے خوار ہو کر نکلے گا،عالمی امن اور انسانی حقوق کے علمبرداروں کے لیے بھی یہ پیغام ہے کہ دنیا میں امن قائم کرنے کے لیے مسئلہ کشمیر کشمیریوں کی امنگوں اور خواہشات کے مطابق حل کیا جائے۔ محمد غالب نے کہا کہ اقوام متحدہ کے قیام کا مقصد ناکام ہو چکا ہے یہ ادارہ بڑی طاقتوں کا یرغمال بنا ہوا ہے، مظلوم اور محکوم قوموں کے ساتھ انصاف کے دروازے بند ہیں، بھارت جیسا ملک دنیا کے امن کے لیے خطرہ ہے ،خطے میں مسئلہ کشمیر کی وجہ سے سے جنگ کے بادل منڈلا رہے ہیں، دنیا کو ماضی کی عالمی جنگوں سے سبق حاصل کرنا چاہئے موجودہ ایٹمی دور میں حالات کا تقاضا ہے کہ مسائل کو مذاکرات اور پُرامن طور پر حل کیا جائے۔ بھارت جیسا ملک جو عالمی معاہدوں کی پابندیاں نہیں کرتا اس کے خلاف ایسے ٹھوس اقدامات کیے جائیں کہ وہ مذاکرات اور امن کا راستہ اختیار کرے۔
یورپ سے سے مزید