آپ آف لائن ہیں
پیر3؍صفر المظفّر 1442ھ 21؍ستمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

15 معاونین کیخلاف درخواست پر حکومت کو نوٹس جاری

15 معاونین کیخلاف درخواست پر حکومت کو نوٹس جاری


اسلام آباد ہائی کورٹ نے وزیرِ اعظم عمران خان کے 15 معاونینِ خصوصی کے خلاف درخواست پر وفاقی حکومت کو نوٹس جاری کر دیئے۔

جسٹس عامر فاروق کی سربراہی میں اسلام آباد ہائی کورٹ کے ڈویژن بنچ نے کیس کی سماعت کی۔

عدالتِ عالیہ نے وفاقی حکومت اور معاونینِ خصوصی کو اس ضمن میں 3 فروری تک جواب جمع کرانے کی ہدایت کی ہے۔

عدالت نے وزیرِ اعظم عمران خان کے ان 15 معاونینِ خصوصی کو فوری کام سے روکنے کی استدعا اور حکم امتناع کی درخواست مسترد کر دی۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے وزیرِ اعظم کے 15 معاونین خصوصی کی تعیناتیوں کے خلاف درخواست آج سماعت کے لیے مقرر کی تھی۔

شہری فرخ نواز بھٹی کی جانب سے جی ایم چوہدری ایڈووکیٹ نے درخواست دائر کی تھی جس میں وزیرِ اعظم عمران خان کے معاونین خصوصی نعیم الحق، فردوس عاشق اعوان، ندیم افضل، علی نواز اعوان، زلفی بخاری، شہزاد اکبر، معید یوسف، عثمان ڈار سمیت 15 معاونینِ خصوصی کی تعیناتی چیلنج کی گئی تھی۔

یہ بھی پڑھیئے: وزیراعلیٰ سندھ کے معاونین کی تقرری کیخلاف سماعت

درخواست میں وزیرِ اعظم عمران خان سمیت تمام معاونینِ خصوصی کو فریق بناتے ہوئے استدعا کی گئی تھی کہ وزیرِ اعظم کے معاونینِ خصوصی کو وفاقی وزیر اور وزیرِ مملکت کا درجہ غیر قانونی قرار دیا جائے۔

درخواست میں یہ استدعا بھی کی گی تھی کہ وزیرِ اعظم عمران خان اور کابینہ ڈویثرن کے اقدام کو غیر قانونی قرار دیا جائے، نیب کو فریقین کے خلاف کارروائی کا حکم دیا جائے۔

قومی خبریں سے مزید