• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

روسی پالیسیوں کی وجہ سے اس کے ساتھ تعلقات مزید خراب ہوسکتے ہیں، یورپی یونین

یورپی یونین نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ روس کے ساتھ اس کے تعلقات مزید خراب ہوسکتے ہیں۔ یونین کی جانب سے اس خدشے کا اظہار ایک رپورٹ میں کیا گیا جو یورپین کے خارجہ امور کے سربراہ جوزپ بوریل نے آج ایک آن لائن پریس کانفرنس میں جاری کی۔

انہوں نے کہا کہ موجودہ حالات میں ہم سمجھتے ہیں کہ نئی شراکت داری ہمیں روس کے ساتھ قریبی تعاون کی صلاحیتوں کا ادراک کرنے کی اجازت دیتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ جان بوجھ کر اختیار کردہ روسی پالیسی خصوصاً 2014 میں جزیرہ نما کریمیا کو اپنے ساتھ ملانے اور یورپین رکن ریاستوں میں عدم استحکام پیدا کرنے کی تازہ کوششوں کے علاوہ شام، لیبیا اور دوسری جگہوں پر مداخلت نے باہمی تعلقات پر منفی اثر ڈالا ہے۔

اس کے ساتھ ہی انہوں نے مختلف سوالات کے جوابات دیتے ہوئے اس بات کا عندیہ بھی دیا کہ یورپ روس سے تیل اور گیس کی موجودہ مقدار میں خریداری میں کمی نہیں کرے گا۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ یورپین یونین روس کے ساتھ افغانستان، شام، لیبیا، ایران اور مشرق وسطیٰ کے امن کے عمل کیلئے بات چیت کرنے کو تیار ہے۔

یاد رہے کہ جوزپ بوریل کی جانب سے جاری کردہ یہ تازہ رپورٹ برسلز میں آئندہ ہفتے منعقد ہونے والے یورپین سربراہان کے اجلاس میں زیر بحث آئے گی۔

بین الاقوامی خبریں سے مزید