آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعرات17؍جمادی الاوّل 1440ھ 24؍جنوری2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

بالی ووڈ کےصف اول کےہدایت کار راجکمار ہیرانی کا کہنا ہے کہ اُن پر لگائے جنسی ہراساں کرنے کے تمام الزامات غلط اور بے بنیاد ہیں، یہ سب انڈسٹری میں اُن کی ساکھ اور شہرت کو تباہ کرنےکے لیے کیا جارہا ہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بالی ووڈ کے نامور ہدایت کار راجکمار ہیرانی پر ایک خاتون اسسٹنٹ ڈائریکٹر نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ راجکمار ہیرانی نے انہیں فلم ’سنجو‘ کی پوسٹ پروڈکشن کے دوران تقریباً 6 ماہ تک ایک سے زائد بار جنسی طور پر ہراساں کیا ہے۔

راجکمار ہیرانی نے اپنے اوپر لگائے جانے والے خاتون اسسٹنٹ ڈائریکٹر کے الزامات کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ 2 ماہ قبل جب یہ الزامات اُن پر عائد کیے گئے تھےتو وہ بہت زیادہ حیران ہوئے، پھر انہوں نے فیصلہ کیا کہ اس معاملے کو کسی قانونی کمیٹی کے نوٹس میں لانا چاہیئے، لیکن الزام لگانے والی خاتون نے کسی بھی کمیٹی کا نہیں بلکہ میڈیا کا سہارا لےلیا۔

ہدایت کار راجکمار ہیرانی نے کہا کہ یہ سب بد قسمتی سے انڈسٹری میں اُن کی ساکھ اور شہرت کو تباہ کرنے کا واحد طریقہ ہے جس کی وہ شدید مذمت کرتے ہیں۔

واضح رہے کہ خاتون اسسٹنٹ ڈائریکٹر نے ان الزامات سے متعلق راجکمار ہیرانی سمیت ان کے ساتھی ہدایت کار ودھو ونود چوپڑا اور ان کی اہلیہ انوپاما چوپڑا کو مشترکہ طور پر ایک ای میل بھی بھیجی تھی۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں