آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار 23؍ذوالحجہ 1440ھ 25؍اگست 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

ٹرمپ کی کشمیر پر ثالثی کی پیشکش، بھارتی میڈیا میں صف ماتم بچھ گئی

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے کشمیر پر پاکستان اور بھارت کے درمیان ثالثی کرانے کی پیش کش کے بعد بھارتی میڈیا میں صف ماتم بچھ گئی ہے۔

بھارتی میڈیا نے کہا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے بھارت کو حیران و پریشان کر دیا ہے، ایک چینل نے سرخی لگائی کہ امریکا نے بھارت پر کشمیر بم گرا دیا ہے۔

بھارتی وزارت خارجہ کےترجمان رویش کمار کا کہنا ہے کہ مسئلہ کشمیرمیں ثالثی کی پیشکش سےمتعلق امریکی صدر کے بیانات دیکھے، بھارتی وزیر اعظم نے امریکی صدر سے ثالثی کی کوئی درخواست نہیں کی۔

انہوں نے کہا کہ بھارت کا یہ مؤقف رہا ہے کہ پاکستان کے ساتھ تمام مسائل پر صرف دوطرفہ بات چیت ہوگی، پاکستان اور بھارت کے درمیان تمام مسائل کے حل کی بنیاد شملہ معاہدے اور لاہور اعلامیے میں موجود ہے۔

دوسری طرف بھارت کے سابق وزیر ششی تھرور نے کہا ہے کہ ٹرمپ کو بالکل بھی نہیں معلوم کہ وہ کیا کہہ رہے ہیں، ان سے وزیر اعظم نریندر مودی نے ملاقات کے وقت جو کچھ کہا تھا یا تو وہ ٹرمپ نے سمجھا ہی نہیں یا ٹرمپ کو بریفنگ نہیں دی گئی۔

ششی تھرور نے کہا کہ ٹرمپ کو نہیں معلوم کہ کشمیر پر کسی تیسرے ملک کی جانب سے ثالثی سے متعلق بھارت کا موقف کیا ہے۔

کانگریس کے رہنما ششی تھرور نے مطالبہ کیا کہ بھارتی وزارت خارجہ وضاحت کرے کہ بھارت نے ٹرمپ سے کبھی اس معاملے پر ثالثی کا مطالبہ نہیں کیا۔

واضح رہے کہ وائٹ ہاؤس کے اوول آفس میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور وزیراعظم عمران خان میں ون آن ون ملاقات میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے وزیراعظم عمران خان سے مسئلہ کشمیر پر ثالثی کی پیشکش کی ہے۔

قومی خبریں سے مزید