آپ آف لائن ہیں
جمعہ7؍صفر المظفّر 1442ھ 25؍ستمبر2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

فلم انڈسٹری میں نام بنانے والے آج اسے نالی کہہ رہے ہیں، جیا بچن

فلم انڈسٹری میں نام بنانے والے آج اسے نالی کہہ رہے ہیں، جیا بچن 


نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) سشانت سنگھ راجپوت کی موت کی تحقیقات میں ڈرگز اینگل سامنے آنے کے بعد بولی وڈ کو نشانہ بنانے والوں پر سماج وادی پارٹی کی راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ جیا بچن نے تنقید کی ہے۔ ایس پی رکن پارلیمنٹ نے بی جے پی کے رکن پارلیمنٹ روی کشن پر بالواسطہ طور پر تنقید کرتے ہوئےکہا کہ جس تھالی میں کھایا، اسی میں چھید کر رہے ہیں۔دراصل پارلیمنٹ کے اجلاس کے پہلے دن روی کشن نے لوک سبھا میں نشہ آور اشیا کا موضوع اٹھایا۔ یوپی کے گورکھپور سے بی جے پی رکن پارلیمنٹ روی کشن نے دعویٰ کیا کہ پڑوسی ملک چین اور پاکستان، بھارت کی نوجوان نسل کو برباد کرنے کے لئے نشیلی اشیا کی اسمگلنگ کرا رہے ہیں اور نشے کے اس جال میں بڑی تعداد میں فلم انڈسٹری کے لوگ بھی شامل ہیں۔ روی کشن کے اس دعوے پر سماج وادی پارٹی کی راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ جیا بچن نے ایوان میں سخت ردعمل ظاہر کیا ہے۔رکن پارلیمنٹ جیا بچن نے نام لئے بغیرکہا کہ فلم انڈسٹری میں شامل لوگ سوشل میڈیا کے ذریعہ بھڑک رہے ہیں۔انڈسٹری میں اپنا نام بنانے والے لوگوں نے اسے نالی کہا ہے۔ میں اس سے بالکل بھی متفق نہیں ہوں۔ مجھے امید ہے کہ حکومت ایسے لوگوں کو اس طرح کے الفاظ کا استعمال نہ کرنے کے لئے کہے گی۔جیا بچن نے کہا کہ ’صرف اس لئے کہ کچھ لوگ برے ہیں آپ پوری انڈسٹری کی شبیہ کو میلا نہیں کرسکتے۔ مجھے شرم آتی ہے کہ فلم انڈسٹری سے ناطہ رکھنے والے لوک سبھا میں ہمارے ایک رکن نے اس کے خلاف بات کی۔ یہ شرمناک ہے’۔ انہوں نے کہاکہ ’فلم انڈسٹری لوگوں کے لئے روزگار کا ایک ذریعہ ہے۔ یہ ہمیشہ حکومت کی مدد کرنے کے لئے آگے آئی ہے۔ اس لئے، میں آپ سے انڈسٹری کی حمایت کرنے کی گزارش کرتی ہوں۔ واضح رہے کہ روی کشن نے کہا کہ فلم انڈسٹری میں این سی بی اس کی جانچ کر رہی ہے۔

دل لگی سے مزید