• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

پیٹ کی چربی کم کرنے میں ایلوویرا کا جادوئی کردار

پتوں پر مشتمل جنگلی پودے ایلوویرا کو گھیکوار اور کنوار گندل بھی کہا جاتا ہے، ماہرینِ جڑی بوٹیوں کی جانب سے ایلوویرا کے پتوں میں موجود لیس دار مواد کو انسانی صحت کے لیے نہایت مفید قرار دیا جاتا ہے۔

ماہرین کے مطابق ایلوویرا سے جہاں جِلد اور خوبصورتی سے متعلق متعدد مسائل کا حل ممکن ہے وہیں یہ جسم میں جمی چربی کو پگھلانے میں بھی اہم کردار ادا کرتا ہے، خوبصورتی میں اضافے اور وزن میں کمی کے لیے ایلوویرا کو براہ راست کھایا اور اس کا جوس بنا کر بھی پیا جا سکتا ہے۔

جڑی بوٹیوں سے علاج کرنے والے ماہرین کی جانب سے ایلوویرا کو بہت اہمیت دی جاتی ہے جبکہ پیٹ، جِلد، ایکنی، کیل، مہاسوں، معدے، جگر کے متعدد مسائل اور موٹاپے سے متعلق شکایات لے کر آنے والے افراد کا بھی ایلوویرا کی مدد سے ہی علاج تجویز کیا جاتا ہے۔

ایلوویرا کے ذریعے وزن میں کمی اور پیٹ کی چربی کیسے کم کی جائے ؟

جسمانی وزن میں کمی کے خواہشمند افراد اسے بطور مشروب روزانہ صبح نہار منہ استعمال کر سکتے ہیں ( یہ عمل رات سونے سے قبل بھی کیا جا سکتا ہے )۔

جسمانی وزن کم کرنے خصوصاً پیٹ کی چربی ایک ماہ کے اندر اندر  گھلانے کے لیے ایلوویرا کے 3 سے 4 انچ کے ٹکڑے سے سفید لیس دار مواد نکال کر ایک عدد کھیرے، ایک انچ ادرک، چند ہرے دھنیے کی پتیوں کے ساتھ گرائینڈ کر کے پی لیں۔

ذائقہ بہتر بنانے کے لیے اس میں لیموں کا رس یا پھر کوئی اور سبزی جیسے  بند گوبھی اور گاجر بھی شامل کی جا سکتی ہے۔

ایلوویرا جیل کو بغیر کوئی سبزی شامل کیے سادے پانی میں گرائینڈ کر کے بھی استعمال کیا جا سکتا ہے۔

جیل کا براہ راست استعمال میٹابالزم تیز کرتا ہے، وزن میں کمی کا سبب بنتا ہے، کمر کے گرد جمی چربی گھلاتا ہے، قبض سے بچاتا ہے، کولیسٹرول لیول متوازن بناتا ہے، جوڑوں کے درد سے نجات دلاتا ہے اور زہریلے مادوں کاجسم سے اخراج ممکن بناتا ہے۔

صحت سے مزید