| |
Home Page
جمعہ 05 ربیع الاوّل 1439ھ 24 نومبر 2017ء
July 17, 2017 | 12:00 am
سیاسی اختلاف کو سیاسی تصادم بننے سے بچانا ہوگا،ساجد نقوی

Todays Print City News

لاہور (نمائندہ جنگ)قائد ملت جعفریہ پاکستان اور اسلامی تحریک پاکستان کے سربراہ علامہ سید ساجد علی نقوی نے واضح کیا ہے کہ ملک پہلے ہی مختلف مسائل کا شکار ہے، مزید کسی بحران کا متحمل نہیں ہوسکتا، جے آئی ٹی رپورٹ کے بعد مختلف آرا سامنے آئیں جوجمہوری معاشرے کی عکاس ہیں، سیاسی اختلاف کو سیاسی تصادم سے بننے سے بچانا ہوگا، پاکستان کے اصل مسائل دہشتگردی،ناانصافی،غربت، بے روزگاری ہے، ملکی استحکام کےلئے سیاسی و ذاتی مفادات سے بالاتر ہوکر غور کرنے کی ضرورت ہے،آئی ٹی پی کی سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے علامہ ساجد علی نقوی کا کہنا تھا کہ اسلامی تحریک پاکستان کے ذمہ دارروں کوآئندہ قومی انتخابات سے قبل سیاسی طور پر حلقوں میں جانا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ آئند ہ انتخابات میں بھر پور مہم چلائیں گے،تاکہ عوام کو درست رہنمائی فراہم کی جا سکے۔ ا ن کا کہنا تھا کہ پاکستان مختلف مسائل کا شکا ر ہے مزید کسی بحران،ایڈونچر کا متحمل نہیں ہوسکتا،۔قائد ملت جعفریہ نے زوردیا کہ سی پیک سمیت اہم منصوبے زیر تکمیل ہیں جس سے معاشی اعشاریے بہتر ہونگے خطے کی بدلتی صورتحال، عالمی منظر نامہ پر وقوع ہونیوالے عوامل پربھی غور کرنے کی ضرورت ہے ہمیں کوشش کرنا ہوگی کہ تمام مسائل بات چیت اور مذاکرات کے ذریعے حل ہوں۔علامہ سید ساجد علی نقوی کا مزید کہنا تھا کہ اس وقت ملکی آبادی جوکہ 20کروڑسے تجاوز کرچکی ہے رپورٹس کے مطابق 6کروڑ سے زائد افراد خط غربت سے نیچے زندگی گزارنے پر مجبور ہیں جبکہ ملکی آبادی کے بڑے حصے کو پینے کا صاف پانی تک میسر نہیں، توانائی بحران اور دہشت گردی کے باعث معیشت تباہی کے دہانے تک پہنچ گئی۔