| |
Home Page
اتوار 3؍ جمادی الاوّل 1439ھ 21 ؍ جنوری2018ء
January 12, 2018 | 12:00 am
قصور میں ایک اور کمسن کو قتل کیے جانے کا واقعہ رونما،چھٹی جماعت کے طالب علم کی لاش برآمد

Todays Print

قصور میں ایک اور کمسن کو قتل کیے جانے کا واقعہ رونما،چھٹی جماعت کے طالب علم کی لاش برآمد

قصور‘شیخوپورہ(مانیٹرنگ ڈیسک‘ایجنسیاں) قصور میں ایک اور کمسن کو قتل کیے جانے کا واقعہ رونما ہوا ہے جہاں تحصیل پتوکی سے چھٹی جماعت کے طالب کی لاش ملی ہے۔نمائندہ کے مطابق چھٹی جماعت کا طالب علم شرق عرف بوبی تین روز قبل اسکول جاتے ہوئے اغوا ہوا تھا‘اس کی اطلاع جب والدین نے پولیس کو دی تو پولیس نے رشتے داروں میں تلاش کرنے کا کہا اور کوئی کارروائی نہیں کی۔نمائندہ نے بتایا کہ بچے کی لاش جمعرات کو نواحی گاؤں ڈھولن چک نمبر 27 میں کسانوں کو کھیتوں سے ملی جس کی اطلاع انہوں نے پولیس کو دی۔پولیس نے بچے کی لاش تحویل میں لے کر اسے پوسٹ مارٹم کے لیے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر اسپتال پتوکی منتقل کردیا‘ذرائع کاکہنا ہے کہ بچے کی گردن پر نشانات پائے گئے ہیں جس سے اسے گلا دبا کر قتل کیے جانے کا شبہ ظاہر کیا جارہا ہے۔علاوہ ازیں ننھی زینب کے ساتھ زیادتی اور قتل کے لرزہ خیز واقعے کے بعد ایک اور معصوم لڑکی کے ساتھ زیادتی کا واقعہ منظر عام پر آیا ہے۔ بھلوال میں 16 سالہ لڑکی کو نامعلوم افراد نے زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد بے دردی سے قتل کردیا۔تفصیلات کے مطابق سرگودھا کی تحصیل بھلوال کے علاقے تصور آباد میں کھیتوں سے 16 سالہ لڑکی کی لاش برآمد ہوئی ہے‘لڑکی کی شناخت( س) کے نام سے ہوئی ہے۔اسکے باپ محمد خان کا کہنا ہے کہ اس کی بیٹی صبح سویرے رفع حاجت کے لیے کھیتوں میں گئی جہاں نامعلوم افراد نے اسے زیادتی کانشانہ بنانے کے بعد گلا دبا کرسفاکی سے قتل کردیا۔پولیس کا کہنا ہے کہ مقتولہ کی لاش قریبی اسپتال منتقل کردی گئی ہے، پوسٹ مارٹم کے بعد لڑکی کے قتل کی وجوہات کا تعین ہوپائے گا۔ واقعے کی رپورٹ درج کرلی گئی ہے جب کہ تفتیش بھی شروع ہوگئی ہے۔ادھرشیخوپورہ کے نواحی علاقہ میں 6 روز قبل اغوا کے بعد قتل ہونے والی 8 سالہ کم سن بچی کا قاتل مبینہ پولیس مقابلے کے دوران اپنے ہی ساتھی کی گولی لگنے سے ہلاک ہو گیا۔ تفصیلات کے مطابق فاروق آبادکے رہائشی شیراز عرف راجو نے گزشتہ 6 روز قبل اپنے ہمسائے کی 8سالہ بچی کو اغوا کرکے قتل کرنے کے بعد لاش کو محلہ گورو نانک پورہ میں کوڑے میں پھینک کر فرار ہو گیا تھا کہ گزشتہ جمعرات کے روز پولیس کو خفیہ اطلاع ملی کہ 8سالہ بچی کا قاتل فاروق آباد سے ملحقہ قصبہ نوکھر میں ساتھیوں سمیت موجود ہے پولیس نے شیراز عرف راجو کو پکڑنے کے لئے ایک مکان پر چھاپہ مارا تو ملزمان نے پولیس پر فائرنگ کر دی ایک گھنٹہ مقابلہ کے بعد شیراز عرف راجو اپنے ساتھیوں کی فائرنگ سے سے مارا گیا۔