| |
Home Page
اتوار یکم جمادی الثانی 1439ھ 18 فروری 2018ء
February 10, 2018 | 12:00 am
ٹی ٹی پی کمانڈر خان سجنا کی افغانستان میں تدفین

Todays Print

کراچی (نیوز ڈیسک) امریکی ڈرون حملے میں ہلاک کالعدم تحریک طالبان پاکستان ٹی ٹی پی کے کمانڈر خان سید سجنا کو افغانستان میں دیگر 9 ساتھیوں سمیتدفنادیا گیا ہے ۔ میڈیا رپورٹ میں انٹیلی جنس ذرائع کےحوالے سے بتایا گیا ہے کہ کالعدم ٹی ٹی پی کے کمانڈر خان سجنا دیگر 9ساتھیوں سمیت افغانستان کے علاقے خڑ تنگی میں ڈرون حملے میں مارا گیا۔ذرائع نے تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ خان سجنا کو ان کے دیگر ساتھیوں کے ہمرا خڑ تنگی کے علاقے میں ہی دفنا دیا گیا۔کالعدم ٹی ٹی پی کی جانب سے تاحال اس خبر کی تردید نہیں کی گئی۔خیال رہے کہ خان سجنا کو کراچی میں نیول بیس پر حملے کے علاوہ 2012 میں خیبر پختونخوا میں بنوں کی ایک جیل توڑ کر طالبان کے 400 جنگجووں کو رہا کرنے میں ملوث قرار دیا جارہا تھا۔ٹی ٹی پی محسود گروپ کے کمانڈر کے حوالے سے حکام نے کہا تھا کہ سجنا نہ ہی تعلیم یافتہ تھا اور نہ ہی مذہبی تھا لیکن وہ جنگجو اور افغانستان میں لڑنے کا تجربہ رکھتا تھا۔یاد رہے کہ امریکا کے مشرقی صوبے پکتیا میں 8 فروری کو امریکا کی جانب سے کیے گئے ڈرون حملے میں ایک گاڑی کو نشانہ بنایا گیا تھا۔پکتیا کے صوبائی پولیس سربراہ کے ترجمان شاہ محمد نے کہا تھا کہ امریکی ڈرون حملے کے نتیجے میں 4 دہشت گردوں کو مارا گیا ہے۔امریکی ڈرون حملہ افغانستان کے صوبے پکتیا کے ضلع برمال کے پہاڑی علاقے میں ایسی جگہ کیا گیا تھا جہاں اطلاعات کے مطابق حقانی نیٹ ورک کے جنگجووں اور کالعدم پاکستان تحریک طالبان گروپ سرگرم ہے۔