• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

کراچی: جامع کلاتھ مارکیٹ میدانِ جنگ بن گئی، تاجر آج دھرنا دینگے

—فائل فوٹو
—فائل فوٹو

کسٹمز کے چھاپے پر کراچی کی جامع کلاتھ مارکیٹ میدانِ جنگ بن گئی، چھاپے کے خلاف تاجروں نے احتجاج کرتے ہوئے پولیس پر پتھراؤ کیا، توڑ پھوڑ کی اور ٹائر جلائے، پولیس نے ہوائی فائرنگ اور لاٹھی چارج کرتے ہوئے کئی تاجروں کو گرفتار کر لیا، جس پر تاجروں نے آج احتجاج کرتے ہوئے دھرنا دینے کا اعلان کر دیا۔

جامع کلاتھ مارکیٹ سے متصل کپڑے کی مارکیٹ میں کسٹمز انٹیلی جنس نے رات گئے کارروائی کی۔

جس پر تاجروں نے شدید احتجاج کرتے ہوئے ٹائر جلائے، پولیس پر پتھراؤ کیا اور ایم اے جناح روڈ کو بند کر دیا۔

2 گھنٹے تک پولیس اور مظاہرین کے درمیان آنکھ مچولی کا سلسلہ جاری رہا،جس کے بعد پولیس نے شدید ہوائی فائرنگ اور لاٹھی چارج کر کے مظاہرین کو منتشر کر دیا۔

پولیس نے بعض مظاہرین کو حراست میں لے لیا، پو لیس کے مطابق چھاپے کے دوران بڑی تعداد میں اسمگل شدہ سامان برآمد کیا گیا۔

تاجروں نے فائرنگ سے 4 افراد کے زخمی ہونے کا دعویٰ کرتے ہوئے کہا کہ سامان غیر قانونی نہیں۔

تاجروں نے عدالت جانے اور صبح جامع کلاتھ مارکیٹ کے سامنے دھرنا دینے کا اعلان کر دیا۔

’جیو نیوز‘ سے گفتگو میں تاجروں نے احتجاج کر کے سڑک بند کرنے کا اعلان کیا اور بتایا کہ پولیس جو مال لے کر گئی اس کا کسٹم ادا کیا گیا تھا، ثبوت عدالت میں پیش کریں گے۔

ایس ایس پی ساؤتھ کے مطابق کسٹمز نے اسمگلنگ کے مال کی اطلاع پر چھاپہ مارا تھا جس کی اطلاع متعلقہ تھانے کو بھی دی گئی تھی۔

قومی خبریں سے مزید