آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعرات19؍شعبان المعظم 1440ھ 25؍ اپریل 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

پاکستان کرکٹ بورڈ کے نے سرفراز احمد کو ورلڈ کپ دو ہزار انیس تک کے لئے کپتان نام زد کر دیا،ورلڈ کپ کرکٹ میں پاکستان ٹیم کی قیادت سرفراز احمد کریں گے ۔


چیئرمین پی سی بی احسان مانی نےکپتان سرفراز احمد کے ساتھ لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے سرفراز احمد کی ورلڈ کپ کی کپتانی کا اعلان کیا ہے۔

ان کا کہناہے کہ سرفراز احمد کپتان ہیں اور کپتان رہیں گے، انڈر 19 میں سرفراز احمد کی لیڈر شپ کوالٹی نظر آتی ہے، ان میں شروع سے ہی لیڈر شپ کوالٹی ہے۔

احسان مانی نے کہا کہ سرفراز کی کپتانی پہلی بار 2006 جونیئر ورلڈ کپ میں دیکھی تھی، اس ورلڈ کپ میں پاکستان نے بھارت کو شکست دی تھی۔ سرفراز کی اس دن اور آج کی کپتانی ویسی ہی ہے۔ ان کی کپتانی دیکھ کر شہریار خان کو خط بھی لکھا تھا۔

انہوں نے کہا کہ جب تک کوئی دوسرا نہیں مل جاتا سرفراز ہی کپتان رہیں گے، جب بھی کوئی ایونٹ آتا ہے قیاس آرائیاں شروع ہوجاتی ہیں۔ آسٹریلیا سیریز اور ورلڈ کپ میں سرفراز احمد کپتانی کریں گے۔ پورا بورڈ سرفراز احمد کے ساتھ ہے۔

سرفراز احمد نے احسان مانی کا شکر یہ ادا کرتے ہوئے نیوز کانفرنس میں کہا کہ جس طرح پی سی بی نے مجھ پر بھروسہ کیا ہے میں ان کی امیدوں پر پورا اتروں گا۔

انہوں نے کہا کہ چیئرمین پی سی بی نے شروع سے مجھ پر اعتماد کیا جس سے حوصلہ بڑھا، کوشش کریں گے پاکستان ٹیم بہترین پرفارمنس پیش کرے۔ جنوبی افریقہ کے کھلاڑی سے 3 مرتبہ معذرت کی، بات نکل گئی جس پر معذرت کی اب آگے بڑھنا چاہیئے۔

یاد رہے کہ قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد میچ میں جنوبی افریقا کےکھلاڑی پر نسل پرستانہ جملے کسنے کی وجہ سے تنقید کی زد میں آئے۔

انہوں نے جنوبی افریقی کھلاڑی پھلوکوایو  سے ٹوئٹر پر معافی بھی مانگ لی تھی۔

نسل پرستانہ ریمارکس پر معافی مانگنے کے باوجود آئی سی سی کی جانب سے کپتان سرفراز احمد پر چار میچز کی پابندی عائد کی گئی تھی، جس کے بعد بورڈ نے سرفراز کو وطن واپس بلا کر شعیب ملک کو ٹیم کا کپتان بنایا تھا۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں