آپ آف لائن ہیں
جمعہ7؍صفر المظفّر 1442ھ 25؍ستمبر2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

بھارتی موسیقار کا لے پالک بیٹی کے ہاتھوں سفّاکانہ قتل

بھارت میں مقامی موسیقار ’بینٹ رابیلو‘ اپنی لے پالک بیٹی کے ہاتھوں قتل کر دیئے گئے ، بیٹی نے باپ کو قتل کرنے کے بعد لاش کے متعدد ٹکڑے کیے جنہیں تین سوٹ کیسوں میں ڈال کر دریا میں بہا دیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق گزشتہ روز مٹھی دریا کے قریب سے ایک سوٹ کیس ملا جس میں 59 سالہ بینٹ کے ہاتھ اور دوسرے جسم کے کٹے ہوئے اعضاء برآمد کیے گئے ہیں۔

ممبئی پولیس کے مطابق یہ دوسرا سوٹ کیس ہے جو مٹھی دریا سے برآمد کیا گیا ہے، پولیس کا کہنا ہے کہ 2 دسمبر کو بھی ممبئی کے علاقے مہاراشٹرا سے ایک سوٹ کیس بر آمد کیا گیا تھا جس میں سے بینٹ کی ٹانگ، ہاتھ اور جسم کے نازک اعضاء بر آمد ہوئے تھے۔

پولیس کے مطابق گزشتہ ہفتے اس قتل میں ملوث دو افراد کو گرفتار کیا گیا تھا جن میں سے ایک مقتول کی لے پالک 19 سالہ بیٹی جبکہ دوسرا فرد لڑکی کا بوائے فرینڈ ہے جس کی عمر 16 سال ہے ۔

پولیس کا کہنا ہے کہ 19 سالی ملزمہ ریا او ر اس کے بوائے فرینڈ نے بینٹ کو 27 نومبر کو اس کے اپارٹمنٹ میں چھری اور بانس کے ڈنڈے سے قتل کیا تھا، بینٹ نے دو شادیاں کی تھیں مگر دونوں میں ناکامی کے سبب وہ اکیلے رہتے تھے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ بینٹ کو قتل کرنے کے بعد اس کی لے پالک بیٹی اور اس کے بوائے فرینڈ نے بینٹ کے ٹکڑے کیے اور 3 بیگوں میں ڈال کر دریا کے پاس پھینک دیئے ۔

ریا نے پولیس کو اپنے بیان میں باپ کو قتل کرنے کی وجہ بتاتے ہوئے کہا کہ بینٹ نے اسے جنسی زیادتی اور تشدد کا نشانہ بنایا تھا کیوں کہ وہ اسے اور اس کے 16 سالہ بوائے فرینڈ کے تعلق کے سخت خلاف تھا ۔

پولیس کا کہنا ہے کہ 3 بیگز میں  سے 2 برآمد کر لیے گئے ہیں جبکہ تیسرے بیگ کے لیے مزید تلاش جاری ہے۔

بین الاقوامی خبریں سے مزید