• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

آئی ایم ایف سے طے کیے گئے فیصلوں پر عملدرآمد شروع


حکومت نے عالمی مالیاتی ادارے (آئی ایم ایف) سے طے کیے گئے فیصلوں پر عمل درآمد شروع کردیا۔

ذرائع کا بتانا ہے کہ آئی ایم ایف سے طے شدہ فیصلے کے تحت ترمیمی فنانس بل کابینہ کے اگلے اجلاس میں پیش کیا جائے گا۔

ترمیمی فنانس بل میں شیڈول 6 ختم کردیا جائے گا، شیڈول 6 کے خاتمے سے 350 ارب روپے کی ٹیکس مراعات ختم ہو جائیں گی۔

ذرائع کے مطابق پٹرولیم ڈیویلپمنٹ وصولی کا ہدف 600 سے کم کر کے 356 ارب روپے مقرر کیا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق پٹرولیم لیوی بڑھانے یا کم کرنے کا اختیار وزیراعظم عمران خان کو دینے کی تجویز ہے۔

ترمیمی فنانس بل میں رواں مالی سال کے لیے ٹیکس وصولیوں کا ہدف 5800 ارب سے بڑھا کر 6100 ارب روپے مقرر کرنے کی تجویز ہے۔

ذرائع کے مطابق ترقیاتی پروگرام میں 200 ارب روپےکمی کرنے کی تجویز بھی ترمیمی بل کا حصہ ہے۔

پاکستان کوآئی ایم ایف سے 1 ارب ڈالر سے زیادہ کی قسط کے لیے ان اقدامات پر عمل کرنا ہے، 12 جنوری 2022 سے پہلے آئی ایم ایف کی شرائط پر عمل درآمد کرنا ہے۔

قومی خبریں سے مزید